78

فیاض الحسن چوہان کے بیٹے فہد حسن کے ایف ایس سی کے امتحان میں فزکس کے پریکٹیکل میں نتیجہ تبدیل کیے جانے کا انکشاف

پنجاب کے وزیرِ کالونیز فیاض الحسن چوہان کے بیٹے فہد حسن کے ایف ایس سی کے امتحان میں فزکس کے پریکٹیکل میں نتیجہ تبدیل کیے جانے کا انکشاف ہوا ہے، راولپنڈی تعلیمی بورڈ کے کنٹرولر نے ردوبدل کی اطلاع پر نتیجہ روک کر تحقیقات کا حکم دے دیا۔ فیاض الحسن چوہان کا کہنا ہے کہ ان کے بیٹے کے نمبروں کے حوالے سے کسی قسم کا کوئی غیر قانونی کام نہیں ہوا ہے۔ ’جیو نیوز‘ کے مطابق صوبائی وزیر فیاض الحسن چوہان کے بیٹے فہد حسن نے راولپنڈی تعلیمی بورڈ کے زیرِ اہتمام ایف ایس سی کا امتحان دیا تھا، لیکن بورڈ نے فہد حسن کے نتائج جاری نہیں کیے۔ کنٹرولر امتخانات کے خط میں کہا گیا ہے کہ فہد حسن کے فزکس پریکٹیکل کے نمبر 14 سے بڑھا کر 30 کرنے کے الزام میں نتیجہ روکا گیا ہے، ذمہ داروں کے تعین کے لیے دو رکنی کمیٹی قائم کردی گئی ہے۔ راولپنڈی بورڈ کے چیئرمین ڈاکٹر غلام دستگیر کے مطابق فیاض الحسن چوہان نے بیٹے کے نمبروں میں تبدیلی پر انکوائری کے لیے درخواست دی ہے۔ درخواست میں کہا گیا کہ بیٹے کے نمبروں کی تبدیلی میں ان کا کوئی ہاتھ نہیں، جو ذمہ دار ہے اس کے خلاف انکوائری کریں۔ چیئرمین بورڈ کا مزید کہنا تھا کہ فزکس کے پریکٹیکل 17 جولائی کو ختم ہوئے، جبکہ انہوں نے عہدے کا چارج 18 جولائی کو سنبھالا، تحقیقات میں جو بھی ذمہ دار قرار پایا اس کے خلاف سخت کارروائی کی جائے گی۔ صوبائی وزیر فیاض الحسن چوہان کا کہنا ہے کہ ان کے بیٹے کےنمبروں کے حوالے سے کسی قسم کا کوئی غیر قانونی کام نہیں ہوا، وہ اس معاملے میں ہر قسم کی انکوائری کا سامنا کرنے کے لیے تیار ہیں۔

Facebook Comments