60

چترال چیمبر آف کامرس کے صدر سرتاج احمد خان اور ونگ کمانڈر ( ر ) فرداد علی شاہ نے شہر کے وسط میں خواتین مارکیٹ تعمیر کرنے پر اصولی اتفاق کرلیا ہے

چترال ( نمایندہ آواز ) خواتین کی بڑے پیمانے پر خریداری کے سلسلے میں مشکلات کو دیکھتے ہوئے چترال چیمبر آف کامرس کے صدر سرتاج احمد خان اور ونگ کمانڈر ( ر ) فرداد علی شاہ نے شہر کے وسط میں خواتین مارکیٹ تعمیر کرنے پر اصولی اتفاق کرلیا ہے ۔ جس میں ابتدائی طور پر 50دکانات تعمیر کئے جائیں گے ۔ جبکہ خواتین خریداروں اور بچوں کیلئے مارکیٹ کے اندر واش رومز ، نماز پڑھنے کی جگہ ، ریسٹوران ، اور مستقبل میں خواتین بینک کی سہولت حاصل ہوگی ۔ مارکیٹ کی خاص بات یہ ہے ۔ کہ اس میں دکاندار اور خریدار دونوں خواتین ہوں گی ۔ پردے کا خاص انتظام کیا جائے گا ۔ اور کسی بھی مرد کو خواتین مارکیٹ میں جانے کی اجازت نہیں ہو گی ۔ مارکیٹ کے اندر قائم ریسٹوران میں اُن ماہر شیف خواتین کو ٹریڈیشنل فوڈ تیار کرنے اور فروخت کرنے کے مواقع ہوں گے ۔ ہفتے کے روز مارکیٹ کے مالک ونگ کمانڈر ( ر) فرداد علی شاہ اور چترال چیمبر آف کامرس کے صدر سرتاج احمد خان نے مارکیٹ کے جگہے کا معائنہ کیا ۔ اور اس امر کا اظہار کیا ۔ کہ اس مارکیٹ کی تیاری سے خواتین کو مختلف بازاروں میں گھومنے کی بجائے ایک ہی مقام پر ضرورت کی تمام چیزیں مل سکیں گی ۔ اس سے خواتین کو آنے جانے میں وقت اور سرمائے کی بھی بچت ہوگی ۔ جبکہ مارکیٹ مین اڈے کے قریب ہونے کی وجہ سے اُنہیں آمدورفت میں بھی آسانی ہو گی ۔ بعد آزان چیمبر آف کامرس کے وائس پریذیڈنٹ اتالیق حیدر علی شاہ کی موجودگی میں ہونے والی میٹنگ میں اس بات پر اتفاق کیا گیا ۔ کہ چترال چیمبر اس مارکیٹ کی بھر پور سپورٹ کرے گی ۔ اس حوالے سے صوبائی حکومت سے بھی بات چیت کی جائے گی ۔ اور خواتین جو آبادی کا نصف حصہ ہیں ، اُن کو یہ سہولت فراہم کی جائے گی ۔ انہوں نے اس ا مر کا اظہار کیا ۔ کہ یہ مارکیٹ شرعی طور پر خواتین کو اپنی ضرورت کی اشیاء پردے میں خریدنے کا موقع فراہم کرے گا ۔ اتالیق حیدر علی شاہ نے کہا ۔ کہ اس مارکیٹ کی بہت پہلے ضرورت محسو س کی جارہی تھی ۔ اس سے خواتین کو نہ صرف اپنی مرضی سے خریداری کا موقع ملے گا ۔ بلکہ وسیع ماحول میسر ہونے سے ایک دوسرے سے گُل ملنے اور تبادلہ خیال کا موقع ملے گا ۔ سرتاج احمد خان نے کہا ۔ کہ خواتین کے بزنس کے فروغ کے سلسلے میں پہلے ہی سیکرٹری ٹورزم سے بات ہوئی ہے ۔ اور انشااللہ چترال چیمبر ، ٹورزم ڈیپارٹمنٹ ، ٹریڈ ڈویلپمنٹ اتھارٹی اور سمیڈا مل کر اس کو کامیاب بنائیں گے ۔ ونگ کمانڈر فرداد علی شاہ ن نے کہا ۔ کہ مارکیٹ کی تعمیر وہ خود کریں گے ۔ اور انشاللہ مختصر عرصے میں مکمل کیا جائے گا ۔ قبل ازین سرتاج احمد خان نے چترال سبزی مارکیٹ کا دورہ کیا ۔ اور اُن کے مسائل سنے ۔

Facebook Comments

اپنا تبصرہ بھیجیں