156

وادی تریچ شدید برفباری کی لپیٹ میں ،ذوندرانگرم کے دو غلہ گودام زمین بوس ،لاکھوں کے نقصان کی اطلاع

چترال (نمائندہ آواز )چترال کا دور افتادہ علاقہ تریچ تقریبا چار ہزار گھرانوں پر مشتمل ہے249 حالیہ شدید برف باری کے بعد ملک کے باقی حصوں سے کٹ کر رہ گیا ہے249 رابطہ سڑک بیس دنوں سے بند ہیں. اٹھ ہزار نفوس پر مشتمل آبادی محصورہوکر رہ گئی ہے249 اشیائے خورونوش اور ادویات کی شدید قلت پیدا ہو گئی ہے. ارباب اختیارہیلی کاپٹر پر سیرکرتے نظر آرہے ہیں لیکن میدان عمل میں دور دور تک بھی نظر نہیں آرہے عوام کا وفاقی249 صوبائی حکومت249 ضلعی انتظامیہ اور کمانڈنٹ چترال سکاؤٹس سے پرزور مطالبہ ہے کہ خدارا کچھ تو انصاف کیا کریں249 ساتھ ساتھ میڈیا سے بھی آواز بلند کرنے کی استدعا کرتے ہیں ۔یاد رہے کہ وادی تریچ میں برف باری کا سلسلہ وقفے وقفے سے جاری ہے مزید ایک فٹ برف پڑی ہے تریچ کا مرکزی گاؤں ذوندرانگرام میں غلہ کے دو گودام شدید برف باری کی وجہ سے زمین بوس ہو چکے ہیں جس میں موجود کافی مقدار میں غلہ بھی ملبے تلے دب گیا ہے مقامی بجلی گھر کی نہر کو شدید نقصان پہنچا ہے علاقہ اندھیرے میں ڈوبا ہو اہے مٹی کا تیل وغیر ہ بھی بازار میں دستیاب نہیں ہے۔ نوائے چترال سے بات کر تے ہوئے مقامی لوگوں کا کہنا ہے کہ ڈسٹرکٹ انتظامیہ فورا سڑکیں بحال کر نے کا اہتمام کریں اس کے علاوہ علاقے میں بہت سارے مریضوں کی حالت بھی تشویش ناک ہے جن کو ہسپتال پہنچانے کا کوئی ذریعہ نہیں ہے

Facebook Comments

اپنا تبصرہ بھیجیں