57

2018کے بعد وزیر اعلیٰ ہاؤس کی چابی ایم ایم اے کے پاس ہونگی ، اکرم خان درانی

 

بنوں (ویب ڈیسک)وفاقی وزیر ہاؤسنگ اینڈ ورکس اکرم خان درانی نے کہا ہے کہ 2018کے بعد وزیر اعلیٰ ہاؤس کی چابی ایم ایم اے کے پاس ہوگا بنوں کے نام نہاد دو نمبری سیاستدانوں کی دکانداری بند کر دی ہے اگر مخالفین بنوں کیلئے ایک بھی منصوبہ ثابت نہیں کر سکتے جو انہوں نے شروع یا پایہ تکمیل کو پہنچا یا ہو مذہبی جماعتوں کا اتحاد ایم ایم اے کی شکل میں ہو چکا ہے جو پورے ملک میں کلین سویپ کرئیگی ،ایم ایم اے کے سابق دور حکومت کی طرز پر عام انتخابات میں ووٹ کے ذریعے انقلاب آئے گا پی ٹی آئی کے چیئرمین عمران خان ،وزیر اعلیٰ پرویز خٹک اور ان کی کرپٹ ٹیم مکمل طور پر ناکام ہو چکی ہے خیبر پختونخوا کے سارے معاملات بنی گالہ کے ریموٹ اور برطانیہ کے کنسلٹنٹ کے ذریعے چلائے جا رہے ہیں ،پاکستان پیپلز پارٹی ض،اے این پی ،پی ٹی آئی نے باریوں کی سیاست کرکے عوام کو بے وقوف بنایاعوام غلامی کی زنجیریں توڑ کر ایم ایم اے کے حق میں اپنا فیصلہ کریں گے ۔ وہ ہفتہ کو بنوں کے علاقہ کوٹکہ میر ولی خیل کو پانچ کروڑ روپے کی لاگت سے قدرتی گیس فراہمی منصوبے کی افتتاحی تقریب سے خطاب کر رہے تھے۔ اس موقع پر ممبر صوبائی اسمبلی اعظم خان درانی ، امیدوار پی کے 73زاہد اکرم درانی ،حاجی یعقوب الرحمن ، ضلع کونسل ایجوکیشن کمیٹی کے چیئرمین ملک شکیل خان ،ملک نعیم خان ،جمعیت یوتھ ونگ کے مرکزی آرگنائزر شمس اقمر قریشی ،ضلعی آرگنائزر عابدین خان ،تحصیل ناظم ملک احسان ،قاری محمد عبداللہ ،حاجی محمد نیاز خان اور دیگر مشران و پارٹی عہدیدار بھی موجود تھےاکرم خان درانی نے کہا کہ بنوں کے علاوہ پاکستان میں کوئی بھی علاقہ یا قوم ایسی نہیں جو کہہہ سکیں کہ ہمارے لئے تمام تر ضروریات پوری کی گئی ہیں پاسپورٹ دفتر ،نادرا آفس ،میڈیکل کالج ،یونیورسٹی کینسر ہسپتال 2002سے پہلے بنوں اس سے محروم ضلع تھا جب ایم ایم اے کی حکومت آئی تو ہم نے سب کچھ قربان کرکے بنوں کو یہ سہولتیں میسر کر دی اور آج وہ ضلع جو ایک وقت میں کوہاٹ کے ساتھ جانا جاتا تھا آج الحمد اللہ جے یو آئی کی بدولت ملک میں اپنا مقام اور حیثیت رکھتی ہے اکرم خان درانی نے کہا کہ ہم نے معدنی ذخائر دریافت کئے ہیں جس کی بدولت آج پورے پاکستان کو صوبہ خیبر پختونخوا سے 60فیصد تیل در آمد کی جاتی ہے اسی طرح وفاقی حکومت سے خیبر پختونخوا کوبجلی کی مد میں 110روپے دیئے جا رہے ہیں جوکہ جے یو آئی کی حکومت کا کارنامہ ہے اُنہو ں نے کہا کہ پاک چائنہ اقتصادی راہداری سے ایک نیا ترقی یافتہ پاکستان بن رہا ہے اورمعیشت میں بہتری آئے گی کیونکہ یہ صرف راہداری نہیں بلکہ اس پر جگہ جگہ صنعتی زون تعمیر کئے جائیں گے جس پر ہزاروں ملازمین بھرتی کئے جائیں گے اندرون اور بیرون ملک کاروبار کو توسیع ملے گی اُنہوں نے کہا کہ انشاء اللہ راہداری منصوبے کے تحت عوام آئندہ بنوں سے اسلام آباد گھنٹوں میں سفر طے کریں گے اُنہوں نے کہا کہ بنوں سے تعلق سے رکھنے والے سابق ایم این اے ناصر خان نے بنوں کیلئے اپنے دور میں ایک بار پچاس سائیکل لائے تھے جو دکانداروں پر فروخت کئے تھے اس کے علاوہ اگر کچھ کیا ہو تو قوم کے سامنے لائیں اسی طرح عوامی نیشنل پارٹی کا دور بھی گزرا باچا خان جوایک عظیم لیڈ ر ہیں ان کی عظمت کو سلام پیش کرتا ہوں پشاور ایئر پورٹ کو تو باچا خان کے منسوب کیا گیا مگر افسوس کہ اے این پی نے باچا خان کے نام سے کوئی دوسرا ایئر پورٹ بھی تعمیر کیا ہو تا۔

Facebook Comments