تازہ ترینکاروبار

حکومت کا پٹرولیم مصنوعات کی قیمتیں برقرار رکھنے کا فیصلہ

یکم جون سے پٹرول اور دیگر پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں کسی قسم کا اضافہ نہیں ہو گا

اسلام آباد(آوازچترال نیوز ) حکومت کا پٹرولیم مصنوعات کی قیمتیں برقرار رکھنے کا فیصلہ۔ تفصیلات کے مطابق وفاقی حکومت نے یکم جون سے ملک میں پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ نہ کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ جاری اعلامیہ کے مطابق یکم جون سے پٹرول اور دیگر پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں کسی قسم کا اضافہ نہیں ہو گا۔ یکم جون سے ملک بھر کے صارفین کو پٹرولیم مصنوعات موجودہ قیمتوں پر ہی دستیاب ہوں گی۔ اس سے قبل وزیر خزانہ مفتاح اسماعیل نے پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں مزید اضافے کا عندیہ دیتے ہوئے کہا تھا کہ پیٹرولیم سبسڈی پر فیصلے میں تاخیر سے قومی خزانے کو 135 ارب روپے کا نقصان ہوا۔ ایک انٹرویو میں انہوں نے پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں مزید اضافے کا عندیہ دیتے ہوئے روس کے ساتھ تیل کے سستے معاہدے کے حوالے سے کہا کہ پی ٹی آئی حکومت نے روس سے کوئی معاہدہ نہیں کیا تھا، حماد اظہرکے خط کا ماسکو سے کوئی جواب نہیں آیا تاہم نئی حکومت روس سے گندم لینے کی کوشش کرے گی اور روس نے کوئی راستہ نکالا تو سستا تیل بھی خریدا جائے گا۔ انہوں نے کہاکہ عمران خان نی30 روپے لیوی اور17 فیصد جی ایس ٹی کا معاہدہ کیا، ابھی لیوی اور جی ایس ٹی بڑھانے کا کوئی فیصلہ نہیں ہوا۔ مفتاح اسماعیل نے کہا کہ تجویز تھی موٹرسائیکل سواروں کو ریلیف دیا جائے تاہم نہیں دیا، یہ درست ہے مڈل کلاس کے لیے مشکل حالات ہیں، ہمارا فوکس معاشی حالات کو درست کرنے پر ہے، 40 فیصد امیر ترین گھرانے پٹرول اور ڈیزل استعمال کرتے ہیں، غریب افراد کو امپاور کر رہے ہیں، اتنے پیسے نہیں ہیں کہ سب کو دے دیں۔ واضح رہے کہ حکومت نے گزشتہ ہفتے تمام پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں ملکی تاریخ کا سب سے بڑا اضافہ کرنے کا اعلان کیا تھا۔ حکومت کی جانب سے تمام پٹرولیم مصنوعات کی فی لیٹر قیمت میں 30 روپے کا اضافہ کر دیا گیا تھا، جس کے بعد اب مارکیٹ میں پٹرول 180 روپے فی لیٹر کی قیمت میں دستیاب ہے۔

Facebook Comments

متعلقہ مواد

Back to top button