تازہ ترین

وزارتوں کی تقسیم کا فارمولہ سامنے آگیا

اسلام آباد (آواز چترال نیوز) مسلم لیگ (ن) اور دیگر اتحادی جماعتوں کے درمیان پاور شیئرنگ فارمولے کی تفصیلات سامنے آ گئیں۔  نون لیگ کے سینئر رہنما رانا ثناء اللہ خان نے کہا ہے کہ پیپلز پارٹی وفاقی کابینہ کا حصہ بن رہی ہے، جب دوسری جماعتوں کے نام آ جائیں گے تو وزیراعظم شہباز شریف مسلم لیگ (ن)کے نام فائنل کر دیں گے۔ اتوار کو نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ وزارت خارجہ پیپلز پارٹی نے مانگی تھی، بلاول بھٹو چاہتے ہیں کہ وہ وزیرخارجہ بنیں، اس بات کا ذکر ہوا لیکن ابھی تک پیپلز پارٹی نے نام نہیں دیا۔ وزارت داخلہ، وزارت خزانہ، وزارت پلاننگ، وزارت اطلاعات اور وزارت دفاع مسلم لیگ (ن) کے پاس ہوں گی۔  وزارت کامرس پیپلز پارٹی کے پاس ہو گی، میری ٹائم اور اوورسیز پاکستانیزمیں سے ایک پیپلز پارٹی اور دوسری ایم کیو ایم پاکستان کو دی جائے گی، پیپلز پارٹی کو 11وزارتیں دی جائیں گی۔ وزارت توانائی مسلم لیگ (ن) اور وزارت ہیومن رائٹس پیپلز پارٹی کو دی جائے گی، سینیٹ چیئرمین کیلئے پیپلز پارٹی کے یوسف رضا گیلانی کا کیس چل رہا ہے ان کے ساتھ پہلے بھی زیادتی ہوئی تھی،کیس کے فیصلے کے بعد وہ چیئرمین سینیٹ بنیں گے۔ اسحاق ڈار چیئرمین سینیٹ نہیں بننا چاہتے،اس حوالے سے صرف افواہیں ہیں،گورنر پنجاب مسلم لیگ نون مقرر کرے گی، اس کا فیصلہ وزیراعظم شہباز شریف کریں گے،احمد محبوب کو گورنر پنجاب بنانے کے حوالے سے غور نہیں کیا جارہا۔ گورنر سندھ پیپلز پارٹی اور ایم کیو ایم کی مشاورت سے بنایا جائے گا،یہ سب پہلے ہی طے کیا جا چکا ہے،صدر مملکت کے حوالے سے ابھی تک فیصلہ نہیں کیا گیا کیونکہ مواخذے کیلئے دو تہائی اکثریت درکار ہے،ووٹ پورے ہونے کے بعد ہی فیصلہ کیا جا سکے گا۔

Facebook Comments

متعلقہ مواد

یہ بھی چیک کریں
Close
Back to top button