60

بڑھتی مہنگائی کا عمران خان نے نوٹس لے لیا، وزیراعظم کی کابینہ کو عوام کو ریلیف فراہم کرنے کی ہدایت

اسلام آباد(  آوازچترال   ) وزیراعظم عمران خان نے کرپشن کیسز کا سامنے کرنے والی جماعتوں کو کریمنل پارٹیاں قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ یہ نہ تو سیاسی ہیں نہ جمہوری ,یہ جرائم میں ملوث جماعتیں ہیں ، کسی کرپٹ جماعت سے مذاکرات ہوں گے نہ ریلیف دیں گے ،یہ نیب ختم کرانا چاہتے ،نیب پر میرا بھی کوئی زور نہیں ۔ ان خیالات کااظہار کا اظہار انہوں نے منگل کو وفاقی کابینہ  اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا ۔ وزیراعظم عمران خان نے ملک میں بڑھتی مہنگائی کے پیش نظر کابینہ کو عوام کو ریلیف فراہم کرنے کی کی ہدایات کر دیں، انہوں نے کہا کہ وہ چاہتے ہیں کہ معیشت میں بہتری کا براہ راست فائدہ عوام تک پہنچے، ذرائع کے مطابق کابینہ اجلاس میں مہنگائی،سیاست ،گیس لوڈ شیڈنگ،کورونا ،سانحہ مچھ پر بات چیت کی گئی ۔کابینہ اجلاس میں پی ڈی ایم کی حکومت مخالف تحریک پر بھی بات چیت کی گئی ۔ ذرائع کے مطابق اس موقع پر وزیراعظم نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ کرپشن کیسز کا سامنے کرنے والی جماعتوں کو کریمنل پارٹیاں ہیں ۔یہ نہ تو سیاسی ہیں نہ جمہوری , یہ جرائم میں ملوث جماعتیں ہیں ۔ کسی کرپٹ جماعت سے مذاکرات ہوں گے نہ ریلیف دیں گے،وزیر اعظم نے واضح کیا کہ یہ لوگ نیب ختم کرانا چاہتے ،نیب پر میرا بھی کوئی زور نہیں ۔اگر نیب میری مانتا تو میرے کچھ جاننے والوں کو کیوں گرفتار کرتا۔نیب کو آزادی سے کام کرنے دیں گے ،کوئی دبائونہیں ڈالنے دیں گے۔اجلاس میں وزیرداخلہ نے سانحہ مچھ اور دورہ کوئٹہ سے متعلق کابینہ کو اعتماد میں لیا ۔ بعض کابینہ ارکان کا وزیر اعظم کو ہزارہ کمیونٹی سے ملاقات کے لئے کوئٹہ جانے کا مشورہ دیدیا ۔ بریگیڈئر ر اعجاز شاہ اور ندیم افضل چن نے تجویز دی کہموجودہ حالات میں کوئٹہ جانا چاہئے ، ۔اس کے جواب میں وزیر اعظم نے کہا کوئٹہ ضرور جائیں گے ،اس حوالے جلد شیڈول ترتیب دیں گے ۔ حالات کنٹرول میں ہیں،شہریوں کے تحفظ کے لئے موثر اقدات اٹھائیں گے۔ ذرائع کے مطابق کابینہ اجلاس میں وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی اور عامر ڈوگر نے گیس لوڈ شیڈنگ کا ذکر چھیڑ دیا ۔کابینہ ارکان نے کہا گیس کی لوڈشیڈنگ بڑھ گئی ،فوری اقدامات اٹھائے جائیں ۔ اجلاس کے دوران وفاقی وزراء اسد عمر اور حفیظ شیخ نے مہنگائی کم ہونے کی خوشخبری دیدی ۔ انکا کہناتھاکہ اشیائے خورونوش کی قیمتوں میں مزید بھی کمی آرہی ہے ،اسد عمر نے کہا مہنگائی میں تیزی سے کمی آئی ،مزید کم ہوجائے گی ۔پیپلز پارٹی اور ن لیگ کے دور میں زیارہ گیس لوڈ شیڈنگ ہوتی تھی۔ ماضی کے ادوار کی نسبتہمارے دور میں گیس لوڈشیڈنگ کم ہے۔ وزیرریلویز اعظم سواتی نیکہ آئی ووٹنگ پروزیر اعظم اور کابینہ کو بریفنگ دیتے ہوئے بتایا آئی ووٹنگ پرہر ماہ 60 لاکھ روپے خرچ ہوں ۔وزارت خزانہ نے آئی ووٹنگ کے لئے ساڑھے چار کروڑ روپے کے بجٹ کی منظوری دیدی۔ الیکشن کمیشن آئی ووٹنگ کو لیڈ کرے گا ،وزیر ریلویز کاکہناتھا وزیر اعظم کے ویڑن کو آگے بڑھا رہے ہیں ۔ ذرائع نے بتایا کہ وزیر اعظم عمران خان نے کورونا کے حوالے سے پیدا صورتحال فکر ظاہر کی اور کابینہ اجلاس میں گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ عالمی حالت بتاتے ہیں کہ کورونا سے نہ جانے آگے کیا ہو ۔لوگوں کو کورونا سے بچانے کے لئے ہر ممکن اقدامات اٹھائے جائیں۔

Facebook Comments