80

جب آپ کی باری آئے تو گالیاں دینا آپ ،شہباز گل اور ارشاد بھٹی کے درمیان لڑائی،شہباز گل شو چھوڑ کر چلے گئے

لاہور (  آوازچترال) نجی ٹی وی چینل کے شو میں گفتگو کرتے ہوئے سینئر تجزیہ کار ارشاد بھٹی اور حکومتی ترجمان شہباز گل کے درمیان لفظی جنگ ہو گئی۔ارشاد بھٹی نے اپنی باری آنے پر بولتے ہوئے کہاکہ تمام سیاسی جماعتوں کو خاص طور پر حکومت اور اپوزیشن کی بڑی سیاسی پارٹیوں کو ایک دوسرے کو مضحکہ خیز نام دینے جیسے جادو گرنی، ڈیزل،بلو رانی،نانی اور کافر یا یہودی ایجنٹ کے ٹائٹل دینے سے احتراز برتنا چاہیے۔ تاہم ان کے جواب میں جب اینکر نے شہاب گل سے سوال کیا تو انہوں نے اینکر کی بجائے ارشاد بھٹی کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ میرے گاﺅں میں گھر کے پاس لکی ایرانی سرکس لگا کرتا تھا جس کا میں ٹکٹ خرید کا شو دیکھا کرتا تھا۔وہاں ایک کمرا ہوتا تھا جہاں شیشے لگے ہوتے تھے جو چھوٹا بڑا لمبااور گول منہ دکھایا کرتے تھے۔ اس بات پر ارشاد بھٹی نے ریسپانڈ کرنا چاہا تو شہباز گل شو چھوڑ کر چلے گئے تاہم انہیں واپس شو میں لایا گیااور انہوں نے دوبارہ اپنی بات جاری کی اور کہا کہ میری باری میں نہ بولیں جب اپنی باری آئے تو بیشک گالیاں دیں۔ شہباز گل نے کہا کہ شاید ارشاد بھٹی کو کہا کہ شاید آپ کو پتا نہیں کہ جب ڈونلڈ ٹرمپ پیدا ہوا تو اس کے باپ نے ہر سال بینک میں دو لاکھ ڈالر جمع کراتے تھے۔جب ٹرمپ بیس سال کا ہوا توایک ملین ہو گیااور جب ٹرمپ چالیس سال کے ہوئے تو ان کے والد ہر سال پانچ ملین ڈالر جمع کراتے تھے۔آپ اندازہ لگائیں کہ ٹرمپ کو بلین ڈالر والد کی طرف سے ملے۔شہباز گل نے کہا کہ بھٹی صاحب کو اوقات سے بڑی بات نہیں کرنی چاہیے انہیں ٹرمپ تک نہیں جانا چاہیے بلکہ گوجرانوالہ پنڈی بھٹیاں اور کریلے بھنڈیوں کی بات کرنی چاہیے۔ اس پر ارشاد بھٹی نے کہا کہ آپ مجھے پرسنل بات کررہے ہیں۔تو اس کے جواب میں شہباز گل نے کہا کہ میں آپ کے ساتھ پرسنل نہیں ہو رہا بلکہ آپ نے جو کھچ ماری اسکا جواب دے رہا ہوں۔اس پر ارشاد بھٹی نے کہا کہ چار کھچیں آپ نے ماری ہیں۔

Facebook Comments