121

ٹائیگر فورس کو جوتے ماریں گے…. انجمن تاجران کے صدر نے کھری کھری سنا دیں

لاہور (  آوازچترال) مہنگائی کا جن ایسا بے قابو ہوا ہے کہ کنٹرول میں ہی نہیں آ رہا ہے۔مہنگائی کی دگرگوں صورت حال کا اندازہ آپ اس بات سے بھی بخوبی لگا سکتے ہیں کہ گزشتہ دنوں وزیراعظم عمران خان نے مہنگائی کو کنٹرول کرنے اور عوام کو ریلیف یقینی بنانے کے لیے ساری حکومتی مشینری کو اسی کام پر لگا دیاہے اور اس وقت حکومت کے پاس نہ تو کوئی اور ایجنڈا ہے اور نہ ہی کوئی اور ٹاسک سب کے سب مل کر مہنگائی کے جن کو بوتل میں واپس ڈالنے کے لیے جتے ہوئے ہیں مگر کوئی بھی چیز اس وقت تک کنٹرول میں آتی نظر نہیں آتی۔ مہنگائی کو دیکھنے اور ذخیرہ اندوزوں کے علاوہ ناجائز منافع خوری کرنے والوں کی نشاندہی کے لیے وزیراعظم عمران خان نے ٹائیگر فورس کو میدان میں اتارنے کا کہا ہے۔ اگرچہ ٹائیگر فورس کو مہنگائی کے معاملے میں حکومت کی مدد کرنے کا کہا گیا ہے مگر ابھی تک کہیں سے یہ بات سامنے نہیں آ رہی کہ ٹائیگر فورس کے پاس اختیارات کیاہوں گے۔کیونکہ اس کے لیے تو ضلعی انتظامیہ،پرائس کنٹرول کمیٹی اور مجسٹریٹ کو اختیارات ہوتے ہیں کہ وہ اپنے علاقے میںمہنگائی کو کنٹرول کریں تو کیا اب یہ اختیارات ٹائیگر فورس کو دے دیے جائیں گے ؟اس سوال کا جواب کہیں سے بھی نہیں مل رہا۔ جب کہ دوسری طرف تاجر حضرات جہاں حکومت کے خلاف متحرک ہوئے ہوئے ہیں وہیں وہ ٹائیگر فورس سے بھی نالاں نظر آتے ہیں۔آل پاکستان انجمن تاجران کے صدر محمد نعیم میر نے نجی ٹی وی چینل کے ایک پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ٹائیگر فورس والے مارکیٹ میں آئیں تو سہی ہم انہیں جوتے ماریں گے۔وہ مارکیٹ میں آ کر تو دکھائیں ۔محمد نعیم میر کی اس بات کو کاﺅنٹر کرتے ہوئے پی ٹی آئی راہنما عطاءاللہ خٹک نے کہا کہ ہم آپ کو جوتے ماریں گے۔ آپ کون ہوتے ہیں تعاون نہ کرنے والے اور ہمارے نوجوانوں کو اس قسم کی بات کرنے والے۔اگر آپ نے اس قسم کا کوئی ایکٹ کیا تو ہم آپ کو جوتے ماریں گے۔اور اس کے جواب میں پاکستان انجمن تاجران کے صدر نے کہا کہ بہتر یہی ہے کہ ٹائیگر فورس کو مارکیٹ میں بھیجیں ہی نا کیونکہ اگر یہ وہاں آئے تو ہم انہیں جوتے ضرور ماریں گے۔

Facebook Comments