170

ہوٹل میں بالکونی کے گرنے سے پانچ افراد جان بحق اور گیارہ زخمی ہوگئے۔لاشوں کو ایمبولنس کے ذریعے قصوربھیجوادئیے۔ لواری میں موسم کی خرابی کی وجہ سے زخمیوں کو لیکر ہیلی کاپٹر واپس آگئی

چترال (نمائندہ آوازچترال) چترال میں ایک مقامی ہوٹل میں بالکونی کے گرنے سے پانچ افراد جان بحق اور گیارہ زخمی ہوگئے۔ پولیس ذرائع کے مطابق پنجاب کے ضلع قصور سے تعلق رکھنے والے چار خاندانوں کے بیس افراد سیر وسیاحت کے لئے گزشتہ رات چترال پہنچ گئے تھے اور جمعرات کے دن 11بجے کے قریب ہوٹل کی تیسری منزل پر واقع بالکونی میں اکھٹا ہوکر تصویر کشی میں مصروف تھے کہ بالکونی وزن برداشت نہ کرسکنے کی وجہ سے ٹوٹ گئی جس کے نتیجے میں بالکونی میں کھڑے ہوئے پندرہ افراد نیچے گرگئے۔ حادثے کی اطلاع ملنے پر ریسکیو1122کے اہلکار اور الخدمت فاونڈیشن کے رضا کار موقع پر پہنچ کر زخمیوں کو ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹرز ہسپتال منتقل کیا جہاں پانچ افراد زخموں کی تاب نہ لاکر چل بسے۔ جان بحق ہونے والوں میں رشیدہ، فاخرہ، اعجاز، رتبہ اور عمران زیب شامل ہیں جن کی لاشوں کو ایمبولنس کے ذریعے قصوربھیجوادئیے گئے جبکہ زخمیوں کو پاک آرمی کی ہیلی کاپٹر میں راولپنڈی روانہ کئے گئے تھے لیکن لواری میں موسم کی خرابی کی وجہ سے ہیلی کاپٹر واپس آگئی اور زخمیوں کو ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر ہسپتال میں داخل کرائے گئے ہیں۔ حادثے کی خبر جنگل میں آگ کی طرح پھیل گئی اور بڑی تعداد میں لوگ ہسپتال پہنچ گئے جہاں انہوں نے زخمیوں کو خون کے عطیات دے دئیے۔

Facebook Comments