41

بونی میں ضلعی انتظامیہ کے زیر نگرانی یوم استحصال کشمیر منایا گیا

اپرچترال( نمائندہ آوازچترال)مقبوضہ کشمیر میں نہتے کشمیریوں کے ساتھ بھارتی فوج کے جبرو بربریت اور مظالم کے ایک سال مکمل ہونے پر وزیر اعظم حکومت پاکستان،صوبائی حکومت اور ڈپٹی کمشنر اپر چترال کے احکامات کی روشنی میں اپر چترال کے ہیڈکوارٹر بونی میں ضلعی انتظامیہ اپر چترال کے زیر نگرانی یوم استحصال کشمیر منایا گیا۔ جس میں ڈسٹرکٹ انتظامیہ اپر چترال کے افسران، تحصیل میونسپل ایڈمنسٹریشن مستوج، موڑکہو کے TMOs,پولیس فورس، ٹریفک ڈیوٹی پر مامور پولیس اہلکاراں اور مختلف شعبہ جات سے تعلق رکھنے والے لوگوں نے شرکت کیں۔ شراکاء نے اپنے بازوں پر کالی پٹیاں لگائے ہوئے تھے۔ پروگرام کے آغاز میں بھارتی فوج کے فسطائی عمل، جبرو بربریت اور مظالم کی وجہ سے شہید ہونے والے کشمیری بھائیوں اور بہنوں کی یاد میں ایک منٹ کی خاموشی کی گئی۔ اس دوران ایک منٹ کے لئے ٹریفک اور نقل و حمل کو روک دیا گیا اور نہتے کشمیری مسلمانوں کے ساتھ بھارتی سامراج اور انڈین آرمی کے مغاصبانہ اقدام کی بھر پور مزمت کی گئی۔انہوں نے کہا کہ کشمیر پاکستان کا حصہ ہے اور ہمیشہ رہے گا۔لہذا ہم اپنے مظلوم کشمیری بھائیوں اور بہنوں کے ساتھ کھڑے ہیں اور کھڑے رہیں گے۔

Facebook Comments