93

ایم کیو ایم نے تحریک انصاف کی وفاقی حکومت پر عدم اعتماد کا اظہار کر دیا

کراچی ( آوازچترال نیوز ) ایم کیو ایم نے تحریک انصاف کی وفاقی حکومت پر عدم اعتماد کا اظہار کر دیا، پارٹی ترجمان کی جانب سے جاری کردی بیان میں کہا گیا ہے کہ ڈیڑھ سال کی حکومتی کارکردگی سے مطمئن نہیں، اتحاد وزارتوں کیلئے نہیں بلکہ کراچی کی بہتری کیلئے کیا تھا، وفاق اور سندھ دونوں کی جانب سے شہر قائد کیلئے شروع کیے گئے منصوبے ناکافی ہیں۔تفصیلات کے مطابق ترجمان ایم کیو ایم نے بلاول بھٹو زرداری کی جانب سے وفاقی حکومت کو خیرباد کہہ کر سندھ حکومت کو حصہ بننے کی پیش کش پر ردعمل دیا ہے۔ ترجمان ایم کیو ایم کی جانب سے کہا گیا ہے کہ ایم کیو ایم کی سیاست وزارتوں کے لئے نہیں بلکہ عوام کی فلاح و بہبود کے لئے ہے۔ بلاول سندھ بالخصوص کراچی سےناانصافیوں کاازالہ ایجنڈے میں شامل کریں۔   واٹربورڈ،کےڈی اے، ایل ڈی اےاوربلڈنگ کنٹرول لوکل گورنمنٹ کےماتحت کیے جائیں۔ مزید کہا گیا ہے کہ ترقیاتی منصوبے وفاق یا سندھ حکومت نے شروع کئے ہیں وہ کراچی کیلئے ناکافی ہیں۔ تحریک انصاف کی وفاقی حکومت کی ڈیڑھ سال کی کارکردگی سے مطمئن نہیں۔ واضح رہے کہ پیر کے روز بلاول بھٹو نے ایم کیو ایم کو سندھ حکومت میں شمو لیت کیلئے دعوت دی ۔ بلاول بھٹو کا کہنا تھا کہ جتنی وزارتیں ایم کیو ایم کے پاس وفاق میں ہیں ، سندھ میں بھی اتنی ہی وزارتیں پیپلزپارٹی دینے کو تیار ہے۔ایم کیو ایم چاہے تو سندھ حکومت کا حصہ بن جائے اور وفاقی حکومت کو گرا دے۔ کراچی کو بچانا ہوگا ، عوام کو معلوم ہے کہ وزیراعظم عمران خان نے دھوکا دیا۔ عمران خان کا ہر وعدہ اور ہر دعویٰ جھوٹا ہے ۔ بلاول بھٹو نے کہا کی میئر کراچی خود یہ موقف اپنائے ہوئے ہیں کہ کراچی کی مردم شماری درست نہیں کی گئی ۔ بلاول بھٹو کا کہنا ہے کہ ایم کیو ایم پاکستان تحریک انصاف کی حکومت گرانے میں ہمارا ساتھ دے۔ اب حکومت کو مل کر گھر بھیجنا ہوگا۔ بلاول بھٹو کا کہناتھا کہ سیاسی اختلافات موجود ہیں تاہم سندھ کے حقوق کیلئے ہم ایک ساتھ کھڑیں ہیں۔

Facebook Comments