136

ہوم منسٹر کا آرڈر ہے کہ مسلمانوں کو گولیاں مارنی ہیں: بھارتی پولیس آفیسر کا ویڈیو بیان میں انکشاف

نئی دہلی (آوازچترال نیوز ) : بھارتی پولیس کے ایک آفیسر نے ایک ویڈیو بیان میں انکشاف کیا ہے کہ ہوم منسٹر کا آرڈر ہے کہ مسلمانوں کو گولیاں مارنی ہیں۔ پولیس آفیسر راکیش تیاگی کی پولیس کی وردی پہنے ہوئے ویڈیو سامنے آئی ہے جس میں وہ کہہ رہا ہے کہ ہوم منسٹر کا آڈر ہے بابر، ہمایوں اورنگزیب کی اولادوں ( مسلمانوں) کو گولیاں مارنی ہیں۔راکیش تیاگی نے مزید کہا کہ جس نے بھی پولیس اہلکار پر ایک پتھر پھینکا اسے گولی ماری جائے گی۔   ہوم منسٹر کا آڈر ہے بابر، ہمایوں اورنگزیب کی اولادوں ( مسلمانوں) کو گولیاں مارنی ہیں…بھارتی پولیس آفیسر کا اعلان مسلمانوں کا قتل عام کرنے کی تیاریاں بھارت میں  پولیس آفیسر نے کہا کہ اس پر یا اس کے کسی اہلکار پر کوئی اینٹ پھینکی گئی تو وہ اسکا جواب اینٹ سے نہیں دے گا بلکہ گولی مار دے گا اور اس اینٹ سے رام بندر بنائے گا۔ دوسری جناب سعودی عرب نے اپریل میں اسلام آباد میں ہونے والے او آئی سی اجلاس میں بھارتی شہریت کے متنازع قانون کو بھی زیرِ بحث لانے کا فیصلہ کرلیا ہے۔ واضح رہے کہ کوالالمپورسمٹ کے بعد سعودی عرب نے او آئی سی کو فعال کرنے کا اعلان کردیا ہے۔ سعودی عرب نے او آئی سی کو فعال بنانے کا منصوبہ بنالیا ہے۔ ذرائع کے مطابق سعودی عرب نے کشمیر کے معاملے پر اسلامی سربراہی اجلاس بلانے کا اعلان کردیا ہے۔ سعودی عرب نے کشمیر کے معاملے پر اہم اجلاس اسلام آباد می بلانے کا فیصلہ کیا ہے۔ سعودی عرب کی جانب سے یقین دلایا گیا ہے کہ ترکی، انڈونیشیا، سعودی عرب اور متحدہ عرب امارات سمیت اہم اسلامی ممالک اجلاس میں شرکت کریں گے۔اجلاس وزرائے خارجہ کی سطھ پر بلایا جائے گا جس میں مقبوضہ کشمیر مین جاری بھارتی کرفیو اور شہریت کے حوالے سے منظور ہونے والے حالیہ بل کو زیرِ بحث لایا جائے گا۔ اجلاس میں بحرین ترکی، انڈونیشیا سمیت اہم اسلامی ممالک شرکت کریں گے۔ یہ اجلاس پاکستان میں اپریل میں بلایا جائے گا۔ ذرائع کے مطابق اجلاس سعودی عرب کی جانب سے بلایا جائے گا اور اسلام آباد میں منعقد ہوگا۔اجلاس میں مسلمانوں کے تحفظ کی بات کی جائے گی۔ یاد رہے کہ اسلامی تعاون تنظیم (اوآئی سی) نے بھارتی شہریت کے قوانین پر تشویش کا اظہار کیا تھا۔ اوآئی سی نے مطالبہ کیاتھا کہ بھارت میں مسلم اقلیتوں اور اسلامی عبادت گاہوں کا تحفظ یقینی بنایا جائے، موجودہ بھارتی صورتحال سے مسلمان اقلیت متاثر ہو رہی ہے۔ او آئی سی سیکرٹریٹ کے مطابق اوآئی سی کو بھارتی شہریت کے قوانین پر تشویش ہے۔

Facebook Comments