71

آغا خان ایجوکیشن سروس انتہائی دور افتادہ دیہات میں علم کی روشنی مہیا کرنے کی کاوشوں میں مصروف ہے ..عبدالولی

چترال(نمائندہ آوازچترال) چترال جیسے دور افتادہ علاقے میں معیاری تعلیم کی سہولیات مہیا کرنا انتہائی دشوار ہے۔میں طلبہ کی صلاحیتوں اور اس ادارے کی معیاری تعلیم سے انتہائی متاثر ہوا۔ میں پہلی بار اے کے ای ایس جیسا تعلیمی ادار ے کے اندر آکے اس کی سرگرمیوں کو دیکھا ہے جو انتہائی دور افتادہ اور پسماندہ دیہات میں علم کی روشنی ہر امیر وغریب کے دہلیز میں مہیا کرنے کی کاوشوں میں مصروف ہے۔یہ باتیں گزشتہ دنوں آغا خان ہائر سیکنڈری سکول سین لشٹ میں تینوں ریجنل اسکول ڈیویلپمنٹ یونٹس(آر ایس ڈی یوز)کے زیر نگرانی تمام آغا خان ہائی اور ہائر سیکنڈری سکولوں سے ہم نصابی سرگرمیوں کیمقابلوں کی تقریب سے خطاب کرتے اسسٹنٹ ڈپٹی کمشنر لوئر چترال عبدالولی نے کہی۔انہوں نے کہا کہ یقیناً ایسے علاقوں میں علم کی روشنی پھیلانا صدقہ جاریہ ہے اس سلسلے میں اے کے ای ایس پی چترال کو کسی قسم کی بھی مدد در کار ہو تو چترال انتظامیہ کی خدمات ہر وقت دستیاب ہوں گے۔ تقریب کی صدارت کرتے ہوئے صدر محفل سابق پریزیڈنٹ ریجنل کو نسل چترال صاحب نادرایڈوکیٹ نیآغا خان ایجوکیشن سروس کی تعلیمی کاوشوں کی تعریف کرتے ہوئے ہم نصابی سرگرمیوں کے انعقاد کو سراہا۔صدر محفل نے جیتنے والے طلبہ کی حواصلہ افزائی کے لئے 50 ہزار روپے نقد انعام عنایت کیا۔ یاد رہے آغا خان ہائر سیکنڈری سکول سین لشٹ میںتینوں آرایس ڈی یو ز مستوج،بونی،اور لوئر چترال کے مختلف سکولوں سے57 طلبہ نے حصہ لیا۔ہر آرایس ڈی یو سے19طلبہ ریجنل سطح پر ہم نصابی سرگرمیوں یعنی قرأت،حمد،نعت،قومی ترانہ،ملی نغمہ،تقریر(اردو،انگریزی)مضمون(اردو،انگر یزی) اور کوئز کے کے مقابلے کے لئے منتخب کئے گئے تھے۔۔ہر آر ایس ڈی یو سے منتخب طلبہ تمام ائٹمز میں مقابلے کے لیے چترال کے دور اُفتادہ علاقوں سے آکرنہایت جوش وخروش کے ساتھ شرکت کی۔ ریجنل سطح کیاس پروگرام میں اے کے ای ایس پی چترال کے جی ایم بریگیڈئر ریٹائرڈ خوش محمد اور جملہ سٹاف کے ساتھ بھاری تعداد میں معززیں وعمائدیں بھی تشریف فرما تھے۔اس پروگرام میں جصاحب نادر ایڈوکیٹ مہمان خصوصی اور اسسٹنٹ کمشنر چترال عبدالولی صدر محفل کی نشستوں پر براجمان تھے

Facebook Comments