111

حکومت نےمفاد عامہ کیلئے 8 نئے قوانین کی منظوری دے دی

اسلام آباد (آوازچترال نیوز ) وفاقی وزیر قانون بیرسٹر فروغ نسیم نے کہا ہے کہ حکومت نے مفاد عامہ کیلئے 8 نئے قوانین کی منظوری دے دی، مقدمات کیلئے جدید ٹیکنالوجی استعمال ہوگی، ایک ہی عدالت میں مقدمہ سنا جائیگا، دوسری اپیل کو ختم کیا جا رہا ہے، خواتین کے وراثتی اور دیگر سرٹیفکیٹس کے اجراء کو20 دن تک محدود کیا جا رہا ہے، انصاف کا تیز ترین حصول وزیراعظم کا وعدہ ہے۔وفاقی کابینہ کے اجلاس کے بعد میڈیا بریفنگ میں انہوں نے بتایا کہ مفاد عامہ کیلئے 8 نئے قوانین کی منظوری دی گئی ہے،امید ہے کہ وکلاء کی طرف سے تعاون کیا جائے گا۔ نئے قوانین کے تحت ایک ہی عدالت میں مقدمات سنے جائیں گے۔ مقدمات میں دوسری اپیل کو ختم کیا جا رہا ہے۔ وکلاء کو بھی مصروف رکھنے کا سسٹم لارہے ہیں۔ جدید ٹیکنالوجی کے استعمال سے وقت کی بچت ہوگی۔ مقدمات میں جدید طریقہ کار کے استعمال سے بدعنوانی میں کمی آئے گی۔ دیوانی مقدمات کے فیصلوں اورانصاف کیلئے تین تین نسلیں رل جاتی تھیں۔ پرانے قوانین کے تحت صرف مقدمہ دائر کرنے میں ہی وقت لگ جاتا تھا، اب ایسے قوانین کی منظوری دی گئی ہے جس سے تیز ترین انصاف ملے گا۔ وزیراعظم کا وعدہ ہے کہ انصاف کا تیز ترین حصول بنایا جائے گا۔نئے قوانین سے سول اور دیوانی مقدمات جلد نمٹانے میں مدد ملے گی۔انہوں نے کہا کہ خواتین سے متعلق مقدمات میں دادرسی کی جائے گی۔ خواتین کی وراثتی جائیداد سے متعلق مقدمات بھی جلد نمٹائے جائیں گے۔ وراثتی اور دیگر سرٹیفکیٹس کے اجراء کو 15سے 20 دن تک محدود کیا جا رہا ہے۔

Facebook Comments