85

اپنا گھر سکیم ٗسر کاری ملا زمین کی رجسٹریشن کا عمل شروع

پشاور۔ (آوازچترال رپورٹ)خیبر پختونخوا حکومت کی جا نب سے صوبے کے سرکاری ملازمین کے لئے ”ضرورت کی بنیاد“پر اپنا گھر اور فلیٹ تعمیر کرنے کے منصوبے کے پہلے مرحلے میں ملازمین کی رجسٹریشن کا عمل شروع ہوگیا ہے۔ملازمین سے درخواستیں طلب کرنے او ر ان کی رائے جاننے کے لئے صو بائی محکمہ ہاؤسنگ کی جانب سے مخصوص فارم جاری کیا گیا ہے۔ جس میں ملازمین سے ان کی مرضی کے مطابق رائے طلب کی گئی ہے،سیکرٹری ہاؤسنگ نے اس حوالے سے زیادہ سے زیادہ ملازمین کی رائے جاننے کے لئے پہلے ہی رجسٹرار پشاور ہائی کور ٹ اکاؤنٹنٹ جنرل خیبر پختونخوا، ا?ئی جی پولیس خیبر پختونخوا، تمام انتظامی سیکرٹریوں اور تمام ڈویڑنل کمشنرز و ڈپٹی کمشنرز کو منصوبے کا اعلامیہ اپنے اپنے دفاتر کے نوٹس بورڈز پر آویزان کرنے کی درخواست کی ہے۔ محکمہ ہاؤسنگ کی جانب سے جاری ہونے والے درخواست فارم پر ملازمین سے دیگر معلومات کے علاوہ یہ بھی پوچھا گیا ہے کہ وہ پلاٹ میں دلچسپی رکھتے ہیں یا مکان اور یا فلیٹ حاصل کرنے میں ِیہ بھی پوچھا گیا ہے کہ اس سے قبل کسی دوسری سرکاری ٹاؤن شپ میں ان کے نام پر کوئی پلاٹ یا گھر موجود ہے کہ نہیں خواہشمند سرکاری ملازمین مختلف سوال نامے پر مشتمل درخواستیں ملازمین سے 30 ستمبر تک جع کرکے اپنی رجسٹریشن کرائیں گے۔ جس کے بعد منصوبے کا پہلہ مرحلہ مکمل ہوجائے گا۔جس کے بعد ملازمین کی تعداد اور ضروریات کے مطابق منصوبے کے اگلے مرحلے میں اراضی کی خریداری کا عمل شروع کیا جائے گا یہاں یہ امر بھی قابل ذکر ہے کہ اس سے قبل صوبائی حکومت سرکاری ملازمین کے لئے پشاور میں ریگی للمہ ٹاؤن شپ، ملازئی ہاؤسنگ سکیم کے علاوہ جلوزئی کے مقام پر بھی ہاؤسنگ سکیمیں شروع کرچکی ہیں جن میں ریگی للمہ ٹاؤن شپ کو تقریباًبیس سال بھی کسی حد تک کامیابی ملی جبکہ ملازئی اور جلوزئی ہاؤسنگ سکیم کو تاحال کوئی پزیرائی نہ مل سکی۔

Facebook Comments