پشاور بورڈنے دسویںکے نتائج کا اعلان کردیا،فوزیہ1060نمبرلیکراول قرار | Awaz-e-Chitral

Breaking News

Home / تازہ ترین / پشاور بورڈنے دسویںکے نتائج کا اعلان کردیا،فوزیہ1060نمبرلیکراول قرار

پشاور بورڈنے دسویںکے نتائج کا اعلان کردیا،فوزیہ1060نمبرلیکراول قرار

پشاور(آوازچترال نیوز )تعلیمی بورڈ پشاور نے دسویں جماعت کے سالانہ امتحانات کے نتائج کا اعلان کردیا ہے جس میں لڑکیوں نے میدان مارلیا، سائنس گروپ میں طالبہ جبکہ آرٹس گروپ میں طالبعلم نے پہلی پوزیشن حاصل کی جبکہ مجموعی نتائج کے مطابق طالبات طالبعلموں پر سبقت لے گئیں،طلباء کی کامیابی کا مجموعی تناسب83.56 فیصد رہا ،گزشتہ روز تقسیم انعامات کی تقریب یونیورسٹی پبلک سکول پشاور میں منعقد ہوئی جس میں سیکرٹری ایلیمنٹری اینڈ سکینڈری ایجوکیشن خیبرپختونخوا ارشد خان نے کمپیوٹر بٹن دبا کر باقاعدہ طور پر نتائج کا اعلان کیا،اس موقع پر بورڈ آف انٹرمیڈیٹ اینڈ سکینڈری ایجوکیشن پشاور کے چیئرمین بشیر خان یوسفزئی کے علاوہ مہدی جان، عالم زیب خان ملک مقصود،رئیس خان اوربورڈکے دیگرافسروں سمیت اور محکمہ تعلیم کے حکام، والدین ، اساتذہ اور طلبہ بھی موجود تھے۔ نتائج کے مطابق سائنس گروپ میں فارورڈ پبلک سکول گرلز حیات آباد پشاور کی فوزیہ ابسر نے1060 نمبر لیکر پہلی،پشاورماڈل سکول بوائز 5کوہاٹ روڈ پشاور کے ملک وہاب علی اورپشاور ماڈل گرلز ہائی سکول2دلہ زاک روڈ کی لبنیٰ یونس نے1056 نمبر لیکر دوسری جبکہ پشاور ماڈل گرلز ہائی سکول 2 دلہ زاک کی سدرہ عبید نے1055نمبر لیکر تیسری پوزیشن حاصل کی۔ اس طرح آرٹس گروپ میں عثمانیہ چلڈرن اکیڈمی ، عثمانیہ کالونی نوتھیہ جدید پشاور کے ادریس بختیار نے 984 نمبر لیکر پہلی، یونیورسٹی ماڈل سکول پشاور کی ماہ روشہ خان نے976نمبرلیکر دوسری جبکہ ایگری کلچر یونیورسٹی پبلک سکول اینڈ کالج گرلز پشاور کی زینب نے966 نمبر لیکر تیسری پوزیشن حاصل کی۔دسویں جماعت کے امتحانات میں کل 74ہزار877 طلبہ نے حصہ لیا جن میں 62 ہزار 568 طلبہ کامیاب ہوئے جبکہ کامیابی کا تناسب83.56 فیصد رہا۔ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے سیکرٹری تعلیم ارشد خان نے پوزیشن ہولڈر طلبہ کومبارکباد پیش کرتے ہوئے کہا کہ صوبے میں رٹہ سسٹم کی حوصلہ شکنی کی جائے گی جبکہ بچوں کی تخلیقی صلاحیتیں اجاگر کرنے پر توجہ دی جارہی ہے،انہوں نے کہا کہ موجودہ حکومت طبقاتی نظام تعلیم کو ختم کرنے کی کوشش کررہی ہے تاکہ تمام بچوں کو یکساں نصاب اور ایک جیسا تعلیمی نظام میسرآسکے اور غریب بچے بھی آگے آسکیں ۔ سیکرٹری تعلیم نے کہا کہ صوبے میں ہرصورت آٹھویں جماعت کے امتحانات بورڈکے ذریعے کرائے جائیں گے ، تعلیمی شعبے کو کاروبارکا ذریعہ نہیں بنیں دینگے ۔

error: Content is protected !!