مدینہ کی اسلامی ریاست کے نام پر قوم کوبدترین دھوکہ دیا گیاہے۔ سینیٹر سراج الحق | Awaz-e-Chitral

Breaking News

Home / تازہ ترین / مدینہ کی اسلامی ریاست کے نام پر قوم کوبدترین دھوکہ دیا گیاہے۔ سینیٹر سراج الحق

مدینہ کی اسلامی ریاست کے نام پر قوم کوبدترین دھوکہ دیا گیاہے۔ سینیٹر سراج الحق

لاہور(آوازچترال نیوز)امیر جماعت اسلامی پاکستان سینیٹر سراج الحق نے کہاہے کہ حکومت کا قبلہ وہ نہیں جس کا قوم سے وعدہ کیا گیا تھا۔ ملک کو مسائل کی دلدل میں دھکیلنے والے موجودہ اور سابقہ حکمران برابر کے مجرم ہیں۔ ملک کو گھمبیر صورتحال سے نکالنے کے لیے اسلام کے لافانی نظام کو اپنایا جائے۔ ہماری تمام پریشانیوں اور مشکلات کا حل نظام مصطفیؐ کے نفاذ میں ہے۔ ضلالت اور پستی سے نجات کا ایک ہی ذریعہ ہے کہ ہم تائب ہو کر قرآن کے نظام کو نافذ کردیں۔ استعماری قوتوں کے آلہ کار ملک میں اسلامی نظام کا راستہ روک رہے ہیں، تمام دینی قوتوں کو متحد ہو کر انہیں ناکام بناناچاہیے۔ مدینہ کی اسلامی ریاست کے نام پر قوم کوبدترین دھوکہ دیا گیاہے۔ قیام پاکستان کے وقت ملک میں قرآن کا نظام نافذ کردیا جاتا تو آج ہم دنیا کی سپر طاقت ہوتے۔ ان خیالات کااظہار انہوں نے منصورہ میں ہونے والی پانچ روزہ فہم قرآن کلاس کی اختتامی تقریب، ملی یکجہتی کونسل کے اجلاس اور اپنے اعزاز میں پیر عاصم سہروردی کی طرف سے دیے گئے عشائیہ کے موقع پر خطاب کرتے ہوئے کیا۔
سینیٹر سراج الحق نے کہاکہ آج ملک جن حالات سے دوچار ہے، اس کا اصل مجرم برسراقتدار رہنے والا وہ ٹولہ ہے جس نے پاکستان کو اس کے قیام کے مقصد سے دور رکھا اور نظریہ پاکستان سے بے وفائی اور غداری کی۔ اگر قیام پاکستان کے وقت ہی ملک میں نظام مصطفیؐ نافذ ہو جاتا تو ناصرف پاکستان دو لخت ہونے سے بچ جاتا،بلکہ آج ہم اقوام عالم میں ایک باوقار اور خوشحال قوم کے طور پر پہنچانے جاتے۔ انہوں نے کہاکہ ملک میں صدارتی اور پارلیمانی نظام کی باتیں تو ہوتی ہیں مگر اللہ کے عطا کردہ نظام جس میں پوری انسانیت کی بھلائی کی خود اللہ تعالیٰ نے ضمانت دی ہے، اس کو اپنانے کی بات نہیں کی جاتی۔ انہوں نے کہا 73 سال میں ایک بار بھی اسلامی نظام کو نہیں آزمایا گیا، حالانکہ ہمارے بڑوں نے لاکھوں جانوں کی قربانی آمریت اور نام نہاد جمہوریت کے لیے نہیں بلکہ خلافت کے نظام کے لیے دی تھی۔
سینیٹر سراج الحق نے کہاکہ ملک کو ایک بار پھر آئی ایم ایف اور ورلڈبنک کی خواہش کے مطابق چلانے کی کوشش کی جارہی ہے۔ عوام کو مہنگائی اور ٹیکسوں کی چکی میں پیسا جارہاہے اور خون کا ایک ایک قطرہ نچوڑ کر عالمی مالیاتی اداروں کی پیاس بجھائی جارہی۔سابقہ حکومت کے نقش قدم پر چلتے ہوئے موجودہ حکومت بھی عالمی استعمار کے ایجنڈے کو پورا کر رہی ہے۔ انہوں نے کہاکہ تمام فتنوں کا ایک ہی علاج ہے کہ ملک میں نظام مصطفی ؐ کے نفاذ کے لیے پوری قوم متحد ہو جائے۔علمائے کرام باہمی اختلافات کو بالائے رکھتے ہوئے قوم کی ڈوبتی نیا کو پار لگانے کے لیے یکجہتی اور اتحاد کے پیغام کو لے کر اٹھیں اور ملک پر مسلط ظلم و جبر کے استحصالی نظام کا بوریا بستر گول کردیں۔
سینیٹر سراج الحق نے کہاکہ پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں رمضان سے ایک دن قبل ہونے والے اضافے سے مہنگائی کا سونامی آئے گا۔ حکومت نے غریب روزہ داروں کے لیے پریشانیاں اور مشکلات پیدا کردی ہیں اور غریبوں کی آہ و پکار آسمان کا سینہ چیر کر عرش الٰہی پر پہنچ رہی ہے۔ انہوں نے مطالبہ کیاکہ حکومت فوری طور پر تیل کی قیمتوں میں کیا گیا اضافہ واپس لے۔

error: Content is protected !!