ینگ ڈاکٹرزایسوسی ایشن کا احتجاج کااعلان .ہسپتالوں میں صرف غر یب لو گ آ تے ہیں وہ دس رو پے پر چے کے بجا ئے600اور1000رو پے پر چہ فیس نہیں د ے سکتے ہیں | Awaz-e-Chitral

Home / تازہ ترین / ینگ ڈاکٹرزایسوسی ایشن کا احتجاج کااعلان .ہسپتالوں میں صرف غر یب لو گ آ تے ہیں وہ دس رو پے پر چے کے بجا ئے600اور1000رو پے پر چہ فیس نہیں د ے سکتے ہیں

ینگ ڈاکٹرزایسوسی ایشن کا احتجاج کااعلان .ہسپتالوں میں صرف غر یب لو گ آ تے ہیں وہ دس رو پے پر چے کے بجا ئے600اور1000رو پے پر چہ فیس نہیں د ے سکتے ہیں

شاور(آوازچترال رپورٹ) ۔ینگ ڈاکٹر ز ایسوسی ایشن خیبر پختونخوا نے میڈ یکل ٹیچنگ انسٹی ٹیوٹ ایکٹ اورڈسٹرکٹ ہیلتھ اتھا رٹی کو یکسر مسترد کرتے ہوئے اس سے فرسودہ نظام قراردیدیا جبکہ اس کے علاوہ ایم ٹی آئی قانون کوسپر یم کورٹ نے بھی سو موٹو ایکشن کے ذریعے مسترد کر دیاہے ۔
گزشتہ روز پشاور پر یس میں ینگ ڈا کٹر ز ایسوسی ایشن کے صو با ئی انفا ر میشن سیکر ٹر ی ڈا کٹر سراج،ڈاکٹررضوان کنڈی ،مردان ہیڈ کوارٹر ہسپتا ل کے صدر ڈاکٹر ضیاء الر حمن ،ایم ایم سی کے صدر ڈاکٹرعمرا ن جو ہر ، ڈاکٹرساجد اور دیگر پر یس کا نفر نس کر تے ہو ئے کہاکہ ایم ٹی آ ئی نظام مکمل طور پرنا کا م ہو چکی ہے اور ان کی کا ر کردگی بھی صفر ر ہی ہے۔
انہوں نے کہاکہ سر کا ر ی ہسپتالوں میں صرف غر یب لو گ آ تے ہیں جو غر بت کی لکیر سے بھی نیچے زند گی گزار ر ہی ہے وہ دس رو پے پر چے کے بجا ئے600اور1000رو پے پر چہ فیس نہیں د ے سکتے ہیں جو غر یب کے ساتھ سراسر نا انصا فی ہے ۔انہوں نے کہاکہ ایم ٹی ائی ایکٹ کی طر ز پربننے والی ایک نیا ناسورڈسٹرکٹ ہیلتھ اتھا رٹی کے نظا م کو بھی مسترد کر تے ہیں کیونکہ یہ ایم ٹی آ ئی سے بھی بتر ایکٹ ہے ۔
انہوں نے کہاکہ جس سے مستقل ڈا کٹرز بھی متا ثر ہو تے ہیں کیو نکہ پھر ڈا کٹرز بھی کنٹر کٹ پر کا م کر یگا۔انہوں نے کہاکہ ایم ٹی آ ئی میں خو د مختا ر ی کے نا م پر اقربا پرو ی اور بے قاعد گیوں کا بازار گر م کر ر کھا ہے اور اب سیا سی مدا خلت کیلئے اس کو ضلعی سطح پر بھی لے جا یا جا ر ہا ہے ۔انہوں نے کہا کہ صو با ئی حکومت صو بے میں صحت کے حوا لے سے لفظی نعر ے لگا ر ہے ہیں کیو نکہ اب تک کو ئی تبدیلی نہیں آ ئی ہے اور مز ید صحت کے شعبے کو نا اہل لوگو ں کے ہا تھ میں تھما نے سے بگڑ گئی ہے ، صو بے کے ہسپتا لو ں میں غر یبو ں کے لئے کو ئی علا ج اور ادو یا ت موجود نہیں ہے جبکہ بورڈز کے نا م پراپنی ہی پا رٹی کے سیا سی بند ے بٹھا کر ہسپتا ل میں سیا سی مدا خلت کر ر ہے ہیں ۔
انہوں نے کہاکہ ہسپتا لوں کے انتظامی امو ر کو بہتر بنانے کیلئے سیکر ٹر ی ہیلتھ سے لیکر ایم ایس تک افسروں کو سیا سی اثر ورسوخ سے آزاد کیا جا ئے اور انتظامیہ کو خود مختار ی دی جا ئے ، جبکہ ہسپتا لوں سے ملازمین کی سر کا ر ی حیثیت ختم کر نا نا قابل قبول ہے ۔انہوں نے کہاکہ حکومت چور ی چھپ کے بل بناتے ہیں اور انہیں پاس کر تے ہیں لیکن اس میں اسٹیک ہولڈرزکو مشاورت نہیں کی جا تی ۔
انہوں نے حکومت کو د ھمکی دی کہ اگراسٹیک ہو لڈرز لو اعتماد میں نہیں لیا گیا تو صو بے کے دیگر تنظیموں کے ساتھ مل کر تمام ہسپتالوں کو بند کر کے احتجاجی تحر یک چلا ئینگے جس کی تمام تر ذ مہ دار ی حکومت اور محکمہ صحت پر عا ئد ہو گی۔

error: Content is protected !!