پی ڈی ڈبلیو پی کی 29پراجیکٹس کی منظوری | Awaz-e-Chitral

Breaking News

Home / تازہ ترین / پی ڈی ڈبلیو پی کی 29پراجیکٹس کی منظوری

پی ڈی ڈبلیو پی کی 29پراجیکٹس کی منظوری

پشاور( آوازچترال رپورٹ)۔صوبائی ترقیاتی ورکنگ پارٹی نے19858.640 ملین روپے لاگت کے 29 پراجیکٹس کی منظوری دی ہے یہ منظوری ایڈیشنل چیف سیکرٹری خیبر پختونخوا ڈاکٹر شہزاد خان بنگش کی زیرصدارت جمعرات کے روز منعقدہ پی ڈی ڈبلیو پی کے اجلاس میں دی گئی جس میں سیکرٹری پی اینڈ ڈی ڈیپارٹمنٹ شہاب علی شاہ، پی ڈی ڈبلیو پی کے اراکین، قبائلی اضلاع اور پلاننگ ڈویلپمنٹ اینڈ ریفارمز ڈویژن کے نمائندوں نے بھی شرکت کی۔ اجلاس میں صوبے کی ترقی کے لئے مختلف شعبوں بشمول آبپاشی,سڑکوں اور پلوں ,ڈی ڈبلیو ایس ایس,امداد و بحالی, لوکل گورنمنٹ ,زراعت ,توانائی و برقیات ,صحت, ابتدائی و ثانوی تعلیم ,شہری ترقی اور کثیرالا شعبہ جاتی منصوبوں پر تفصیلی غور و خوض کے بعد 29 منصوبوں کی منظوری دی گئی جبکہ 3 منصوبوں کو سنٹرل ڈویلپمنٹ ورکنگ پارٹی سے منظوری کی سفارش کی گئی جبکہ ایک منصوبے کو واپس لے لیا گیا۔ تفصیلات کے مطابق پانی کے شعبے میں منظور کردہ منصوبوں میں ضلع سوات تحصیل مٹہ میں براوی ایریگیشن سکیم کی تعمیر ضم شدہ اضلاع کے لئے واٹر کورسز کی بہتری /لائننگ کے لئے قومی پروگرام, شمالی قبائلی اضلاع کے لئے پوٹینشل سرفس ایریگیشن سکیم کی تعمیر,ضم شدہ اضلاع واٹر ریسورسز ڈویلپمنٹ پراجیکٹ (ایشیائی ترقیاتی بینک کی معاونت سے ) سب پراجیکٹ ضلع خیبر بار کس ڈیم اور ضلع خیبر میں تبائی ڈیم کی تعمیر اور ضلع دیر پائین میں پنچکوڑہ لفٹ اینڈرائیٹ بینک کینال کی تعمیر کے لئے تفصیلی ڈیزائن شامل ہیں. اسی طرح سڑکوں اور پلوں کے شعبے میں منظور کردہ منصوبوں میں ٹل ،دیر بالا ضلع میں سلطان خیل درہ لفٹ اینڈرائٹ روغانودرہ اور کارو درہ روڈ لفٹ اینڈرائٹ لگمان بانڈہ براستہ ادوکے اور سفارے قمر کی بحالی اور دوبارہ تعمیر شامل ہیں۔ اللہ دا د خیل گاؤں کانی ضیام ریسٹ ہاوس سالگرے براستہ گڈ چوک گاؤں چنار دلدار گھڑی( بارہ کلومیٹر ) مین تنگی روڈ رحمت کلی، سرفراز کلی شاخ نمبر 3 اور چورائی روڈ گجرکلی چارسدہ کی ڈیزائن ,فزیبلٹی سٹڈی, بحالی اور دوبارہ تعمیر شامل ہے.ضلع لکی مروت میں غازی خیل تا پر خیل ( 5.156 کلومیٹر) , زنگی خیل تا میلہ مندرہ خیل( تین کلو میٹر )اور گمبیلا پر خیل تا ونڈا پشان (2.5 کلومیٹر )کی تعمیر, سب ڈویژن ٹانک میں سڑک کی پختگی اور تعمیر اور ضلع باجوڑ میں 14 کلومیٹر سڑک کی پختگی اور تعمیر شامل ہے۔ ڈی ڈبلیو ایس ایس کے شعبے میں منظور کردہ منصوبوں میں گریوٹی فلو ایبٹ آباد کی موجودہ پانی کی سپلائی کے نظام کی بحالی اور بہتری شامل ہیں. بحالی و امداد کے شعبے میں منظور کردہ منصوبوں میں ضم شدہ اضلاع( فیز ٹو)ضم شدہ اضلاع ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی کا قیام شامل ہے۔ لوکل گورنمنٹ کے شعبے میںً صاف پینے کاپانی سب کے لیے ضم اضلاع میں موجودہ/ نئی میونسپل کمیٹی کے لئے فضلے کو ٹھکانے لگانے کے لئے گاڑیوں کی فراہمی اور جنوبی قبائلی اضلاع کے بڑے ٹاؤنز کے لیے میونسپل سروسز /شہری سہولیات کی فراہمی کی منظوری شامل ہے ۔ اسی طرح زراعت کے شعبے میں منظور کردہ منصوبوں میں ضلع چترال خیبر پختونخوا میں باغبانی سرگرمیوں کی ترقی شامل ہے, توانائی و برقیات کے شعبے میں پیزو ایف آر ٹانک سے 132 کے وی ٹرانسمیشن لائن کی تعمیر اور ضلع کرم میں چھپا ری چر خیل ہائیڈرو پاور پراجیکٹ کی تعمیر کی منظوری شامل ہے.صحت کے شعبے میں منظور کردہ منصوبوں میں ضلع صوابی میں سی ایچ ٹوپی کی کٹیگری سی ہسپتال تک درجہ بلندی، ضم شدہ اضلاع میں صحت سہولیات کے لیے دوائیوں اور تشخیصی آلات کی فراہمی اور ہیلتھ نیوٹریشن پروگرام شامل ہیں۔ ابتدائی و ثانوی تعلیم کے شعبے میں منظور کردہ منصوبوں میں قبائلی اضلاع خیبر پختونخوا میں اعلیٰ کارکردگی کے سکولوں کی سکول آف ایکسیلنس میں تبدیلی,( فاٹا) انفراسٹرکچر پروگرام (یو ایس ایڈ) کے تحت سب ڈویڑن کوہاٹ میں تباہ شدہ سکولوں کی تعمیر, قبائلی ضلع کرم میں 5 تباہ شدہ سکولوں کی تعمیر،ایف آر پشاور میں تباہ شدہ سکولوں کی دوبارہ تعمیر اور قبائلی ضلع کرم میں تباہ شدہ سکولوں کی دوبارہ تعمیر شامل ہے۔ شہری ترقی کے شعبے میں مردان میگا پارک کی تعمیر کی منظوری شامل ہے جبکہ کثیر الاشعبہ جاتی سیکٹر میں منظور کردہ منصوبوں میں عسکریت پسندی سے متاثرہ / پسماندہ علاقوں کے لیے خصوصی ترقیاتی پیکیج شامل ہیں۔

error: Content is protected !!