61

حکمران عوام کی مشکلات کا حل ڈھونڈنے اور قانون سازی کرنے کی بجائے گالیوں اور جھوٹ کاپرچار کر رہے ہیں ۔سینیٹر سراج الحق

جھنگ (آوازچترال نیوز)امیر جماعت اسلامی پاکستان سینیٹر سراج الحق نے مودی اور بھارتی آرمی چیف کو خبر دار کیاہے کہ پاکستان اب 65 ء یا 1971 ء والا پاکستان نہیں رہا ۔اگر انہوں نے کوئی غلطی کی تو تباہی و بربادی ان کا مقدر ہوگی ۔ پاکستان کا بچہ بچہ بھارت کے خلاف چلتا پھرتا ایٹم بم ہے ۔ ہم سلطان محمود غزنوی ، احمد شاہ ابدالی اور صلاح الدین ایوبی کی تاریخ دہرانے کے لیے تیار ہیں ۔ مودی نے ابھی تک ہمارے حکمرانوں سے دوستی کی باتیں سنی ہیں ، پاکستانی عوا م کا غصہ نہیں دیکھا۔ کشمیریوں کو بھی اپنے جان و مال اور اپنی ماؤں بہنوں کی عصمتوں کی حفاظت کا حق حاصل ہے ۔بھارتی فوج نے لاکھوں کشمیریوں کا قتل عام کیاہے اور ظلم و جبر اور ریاستی دہشتگردی کی تمام حدیں پھلانگ لی ہیں ۔ عالمی برادری کشمیر میں بھارتی مظالم کا نوٹس لے اور اقوا م متحدہ اپنی قرار داوں پر عملدرآمد کرتے ہوئے کشمیریوں کو حق خود ارادیت دلائے ۔ موجودہ حکومت بھی سابقہ حکومتوں کے نقش قدم پر چل رہی ہے ۔ سیاست جمہوریت اور پولنگ اسٹیشن جاگیرداروں اور سرمایہ داروں کے ہاتھوں یرغمال ہیں ۔ حکمران عوام کی مشکلات کا حل ڈھونڈنے اور قانون سازی کرنے کی بجائے گالیوں اور جھوٹ کاپرچار کر رہے ہیں ۔ قوم کی بیٹی ڈاکٹر عافیہ صدیقی کو امریکہ کے حوالے کرنے والوں نے قومی غیرت و حمیت کا سودا کیاہے ۔ عوام نے ستر سال میں پیپلز پارٹی ، نون لیگ اور فوجی حکومتوں کو بار بار آزمایا ۔ موجودہ حکومت بھی انہی پارٹیوں کے لوگوں کا مجموعہ ہے ۔ ان خیالات کااظہار انہوں نے جھنگ میں ورکرز کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔ کنونشن سے امیر جماعت اسلامی وسطی پنجاب امیر العظیم اور سیکرٹری جنرل جاوید قصوری نے بھی خطاب کیا ۔ اس موقع پر ضلعی امیر بہادر خان ، سردار ظفر حسین اور سیکرٹری اطلاعات قیصر شریف بھی موجود تھے ۔ ورکرز کنونشن میں ہزاروں کارکنوں نے شرکت کی ۔
سینیٹر سراج الحق نے کہاکہ مودی اور بھارتی قیادت خطے کی بدلتی ہوئی صورتحال کو سامنے رکھے ۔ بھارت کا سرپرست امریکہ افغان طالبان سے امن کی بھیک مانگ رہاہے ۔ پاکستان کو تنہا اور کمزور کرنے کی بھارتی سازشوں کو ناکامی کا منہ دیکھنا پڑاہے ۔ بھارت صرف طاقت کی زبان سمجھتا ہے ستر سال میں بھارت سے دوستی کی تمام کوششیں ناکام ہو چکی ہیں اب پاکستانی حکمرانوں کو بھی بھارت سے اسی کی زبان میں بات کرناہوگی ۔
سینیٹر سراج الحق نے کہاہے کہ عہد توڑنے اور یوٹرن لینے والا مسلمانوں کا حکمران نہیں ہوسکتا ۔ غربت ، مہنگائی اور بے روزگاری نے عوام کی زندگی اجیرن کر دی ہے ۔
سینیٹر سراج الحق نے کہاکہ ملکی مسائل اور عوام کی پریشانیوں کا ایک ہی حل ہے کہ ملک میں اسلام کا عادلانہ نظام رائج ہو۔ جماعت اسلامی ملک میں نظام مصطفی ﷺ کے نفاذ کی جدوجہد کر رہی ہے ۔ انہوں نے کہاکہ جماعت اسلامی اقتدار میں آ کر سود کی لعنت کو ہمیشہ کے لیے ختم کردے گی ۔ ہم وسائل کی منصفانہ تقسیم کو یقینی بنائیں گے ۔ امیر اور غریب کے لیے تعلیم اور علاج کی یکساں سہولتیں ہوں گی ۔یکساں نصاب اور نظام تعلیم دیں گے ۔ بزرگوں کو بڑھاپا اور نوجوانوں کو بے روزگاری الاؤنس دیں گے ۔ سینیٹر سراج الحق نے کہاکہ ہم قوم کی طرف سے سعودی ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان کو خوش آمدید کہتے ہیں۔
ورکرز کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے امیر العظیم نے کہاکہ تحریک انصاف چھ ماہ میں مکمل طور پر ناکام ہوچکی ہے ۔ بجلی اور گیس کی قیمتوں میں کئی گنا اضافہ کردیا گیاہے آئی ایم ایف کے قرضوں سے مسائل حل نہیں ہوں گے بلکہ ملک مزید مشکلات کا شکار ہو جائے گا ۔ انہوں نے کہاکہ جماعت اسلامی یکم مارچ سے پورے ملک میں رابطہ عوام مہم کا آغاز کر رہی ہے ۔ ملک میں حقیقی تبدیلی کے لیے عوام جماعت اسلامی کا ساتھ دیں ۔ جماعت اسلامی ہی پاکستان کو مدینہ کی طرز پر اسلامی و فلاحی ریاست بناسکتی ہے ۔

Facebook Comments