61

خیبر پختونخوا حکومت نے محکمہ صحت کا تمام ڈیٹا سنٹرلائزڈ کرنے کا اصولی فیصلہ کرتے ہوئے یو ایس ایڈ کے گلوبل ہیلتھ سپلائی چین پروکریومنٹ سپلائی مینجمنٹ کے ساتھ معاہدہ  

پشاور (آوازچترال نیوز) ۔خیبر پختونخوا حکومت نے محکمہ صحت کا تمام ڈیٹا سنٹرلائزڈ کرنے کا اصولی فیصلہ کرتے ہوئے یو ایس ایڈ کے گلوبل ہیلتھ سپلائی چین پروکریومنٹ سپلائی مینجمنٹ کے ساتھ معاہدہ کر لیا ہے جس کے تحت یو ایس ایڈ محکمہ صحت کو مالی و تکنیکی معاونت فراہم کریگا
اس ضمن میں صوبے کے چار اضلاع کا انتخاب کیا گیا ہے جہاں پر پائلٹ فیز کا آغاز ہوگا اور ایک سال بعد کامیابی کی صورت میں پراجیکٹ صوبے کے دیگر اضلاع تک پھیلا دیا جائیگا ذرائع کے مطابق محکمہ صحت میں اس وقت مختلف پراجیکٹس کام کر رہے ہیں جن کے اپنے اپنے الگ الگ سافٹ وئیر ہیں اب محکمہ صحت یو ایس ایڈ کی مالی و تکنیکی معاونت سے ان تمام سافٹ وئیرز کو ایک سافٹ ویئر میں منتقل کریگا جس سے محکمہ صحت کا تمام ڈیٹا سنٹرلائزڈ ہو جائیگا
ایک سال کے آزمائشی پروگرام کے تحت صوبے کے چار اضلاع لکی مروت ٗ چارسدہ ٗ بونیر اور سوات کا تمام ڈیٹا سنٹرلائزڈ کیا جائیگا اس ضمن میں ان اضلا ع کے ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفیسرز کو ہدایات جاری کر دی گئی ہیں جبکہ منصوبے کیلئے محکمہ صحت کے دو افسروں کو فوکل پرسن بھی مقرر کیا گیا ہے ان میں وزیر صحت کے ڈاکٹر عمیر صدیقی ایڈوائزر ٹیکنیکل اور ائریکٹر ڈسٹرکٹ ہیلتھ انفارمیشن سسٹم کے ڈائریکٹر ڈاکٹر عظمت اللہ خان شامل ہیں ۔

Facebook Comments