70

سرکاری ٹھیکیداروں کاصوبائی اسمبلی کے گھیراؤ کااعلان

پشاور۔ ( آوازچترال رپورٹ) ل پاکستان کنٹریکٹر ایسو سی ایشن نے حکومت سے مطالبہ کیا کہ ٹھیکیدار برادری کے مسائل کو فی الفور ہنگامی بنیادوں پر حل کرے بصورت دیگر 27دسمبر کو صوبائی اسمبلی کے سامنے احتجاج مظاہرہ کر نے پر مجبور ہو جائینگے۔
یہ اعلان گزشتہ روز بنوں ہاؤس پشاور میں آل پاکستان کنٹریکٹر ایسو سی ایشن کے زیر اہتمام ٹھیکیدار برادری کے صوبا ئی کنونشن میں کیا گیاجس میں صوبہ کے تمام اضلاع سے کنٹریکٹرز نے سینکڑوں کی تعداد میں شرکت کی کنونشن سے خطاب کر تے ہو ئے ایسو سی ایشن کے صوبا ئی صدر غلام حبیب،صوبائی جنرل سیکرٹری ملک ریاض اور ضلعی عہدیداروں نے کہا کہ ٹھیکیدار برادرری کو شدید مسائل کا سامنا ہے بینکوں کی جانب سے وید ہولڈنگ ٹیکس کا نفاذ،محکمہ والے ٹھیکیدار کا ٹینڈر منظور کرتے وقت اسے مجبور کرتے ہے اور کم ریٹ پر بھی ڈیمانڈز کی جاتی ہے انہوں نے کہا کہ کوئی بھی منصوبہ فنڈز کی کمی کی وجہ سے سالوں سال چلتا ہے لیکن اس دوران انکم ٹیکس سیلز ٹیکس اور دیگر ٹیکسز میں اضافہ ہوتا رہتا ہے ۔
ان اضافوں کا نشانہ صرف ٹھیکیدار کو بنایا جاتا ہے کیونکہ محکمہ والے اضافہ ٹیکس بھی اسی منصوبوں کے بلوں میں سے کھاٹتے ہے کمیشن مافیا کو ہر محکمہ میں ادائیگیاں ہمیں کرنا پرتی ہے جو کہ ہمارے معاشی قتل کے معترادف ہے۔

Facebook Comments