94

چترال کے دیگر منظور شدہ منصوبوں کی طرح تریچ سے لوٹ اویر تک سڑک کی کشادگی اور بلیک ٹائپنگ کا منصوبہ بھی ترقیاتی پروگرام پی ایس ڈی پی سے نکال دیا ہے۔ عالم زیب ایڈوکیٹ

چترال(نمائندہ آوازچترال)اطلاعات کے مطابق نیشنل ہائے وے اتھارٹی این ایچ اے نے چترال کے دیگر منظور شدہ منصوبوں کی طرح تریچ سے لوٹ اویر تک سڑک کی کشادگی اور بلیک ٹائپنگ کا منصوبہ بھی ترقیاتی پروگرام پی ایس ڈی پی سے نکال دیا ہے اور ٹھیکہ دار اے ایم بی کمپنی کو ٹھیکے کی منسوخی کا خط لکھ دیا ہے پاکستان پیپلزپارٹی ضلع چترال موجودہ حکومت کے اس اقدام کی بھرپور مذمت کرتی ہے۔پی پی پی کے تحصیل صدر عالم زیب ایڈوکیٹ اور انفارمیش سیکرٹری قاضی فیصل سعید نے مشترکہ بیان میں کہا ہے کہ تحریک انصاف کی صوبائی حکومت نے پچھلے5سالوں تک چترال کو نظر انداز کیا۔اُن کے دور میں ریشن کا بجلی گھر کھنڈرات میں تبدیل ہوا۔کالاش ویلی اور دیگر وادیوں کی سڑکیں برباد ہوگئیں۔اب وفاق میں بدقسمتی سے ایسی حکومت آگئی ہے جو عوامی بہبود کی دشمن ہے۔چترال کے ساتھ خاص طورپر بغض رکھتی ہے۔پی پی پی کے رہنماؤں نے وفاقی حکومت کے اس نارواظلم کے خلاف آواز اُٹھانے کے لئے چترال میں آل پارٹیز کانفرنس بُلاکر آئیندہ کا لائحہ عمل تیار کرنے کی ضرورت پر زور دیا ہے۔گیس اور بجلی سمیت اشیائے صرف کی مہنگائی اور یوٹیلیٹی سٹوروں کی بندش کے بعد ترقیاتی سکیموں کے ٹھیکے منسوخ کرنا تحریک انصاف کی عوام دشمنی کا کھلاثبوت ہے۔اس ظلم کے خلاف بھرپور احتجاج کیا جائے گا۔

Facebook Comments