94

نیشنل ہائی وے اتھارٹی نے  . تریچ ٹو لوٹ اویر روڈ کی توسیع اور بلیک ٹاپنگ اور چار آرسی سی پلوں کے منصوبے کو پی ایس ڈی پی سے ختم کردیا ہے

اسلام آباد(   آوازچترال رپورٹ) نیشنل ہائی وے اتھارٹی نے ایک مراسلے کے زریعے  انجینئرنگ کمپنی کراچی کو

مطلع کیا ہے کہ مجاز حکام نے تریچ ٹو لوٹ اویر روڈ کی توسیع اور بلیک ٹاپنگ اور چار آرسی سی پلوں کے منصوبے کو پی ایس ڈی پی سے ختم کردیا ہے ۔لہذا متعلقہ حکام نے اس کی کنسلٹنسی سروسس اور فزیبلٹی رپورٹ کے حوالے سے معاہدہ کو بھی منسوخ کردیا ہے ۔لہذا اس پر مذید کام نہ کیا جائے۔  مراسلات کے مطابق این ایچ اے کی طرف سے کراچی بیسڈABMانجینئرزکراچی، ایم ایس ناردرن انجینئرنگ کنسلٹنٹ کے ساتھ 14مئی 2018 کوتریچ ٹو لوٹ اویر روڈ کی توسیع اور بلیک ٹاپنگ منصوبے کی فزیبلٹی رپورٹ اور ڈیزائن کیلئے معاہدہ کیا گیا تھا۔ جو گزشتہ دن ایک نئے مراسلے کے زریعے مکمل طور پر ختم کردیا گیا ۔ جوکہ ایک افسوسناک امر ہے ۔   چترال خصوصا موڑکہو کے عوام نے ایک درینہ منصوبے کو پی ایس ڈی پی سے ختم کرنے پر انتہائی افسوس کا اظہار کیا ہے۔ اور انصاف کی حکومت میں علاقے کے ساتھ اس ناانصافی پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے علاقے کے ساتھ دشمنی کے مترادف قرار دیا ہے ۔

Facebook Comments