66

چترال کے نوجوان نوکریاں ڈھونڈنے کے بجائے کاروبار کی طرف آئیں۔۔انجینئر فضل ربی

چترال (نذیرحسین شاہ)سینئرنائب صدرپاکستان پیپلزپارٹی ضلع چترال انجینئرفضل ربی جان نے سب ڈویژن مستوج کے مختلف علاقوں میں عوامی اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ آنے والے وقت کیلئے چترال کے نوجوان کوتیاراورمختاط رہنا ہوگا۔انہوں نے آنے والے چیلنجزسے نمٹنے اوراپنے آپ کومستقبل کے مواقع سے فائدہ اُٹھانے کے لئے تیاررہنے پرزوردیا۔انہوں نے کہاکہ مستقبل کاچترال بہت مختلف ہوگا،سی۔پیک کے بننے کے بعدہم سینٹرل ایشیاء اورچائناکے ذریعے پوری دنیاکے ساتھ روابط میں ہونگے اورچترال ان کامحورہوگاچترال کے نواجون کا کردارسینٹر ل ایشیاء اور چائنا کے مارکیٹوں سے لے کریورپ کے مارکیٹ تک ہوگا۔پاکستان میں بے روزگاری پر قابو پانے کیلئے سب سے زیادہ کارگر نسخہ یہی ہے کہ پڑھے لکھے نوجوان، ملازمتوں کی بجائے کاروبار کی طرف آئیں تاکہ نوجوان طبقہ نوکریاں لینے کے بجائے نوکریاں پیدا کرنے کا ذریعہ بن سکیں۔
انجینئرفضل ربی نے کہاکہ پاکستانی تاجر چینی زبان سیکھ کر چین کا دورہ کریں اور وہاں کے کاروباری کلچرکا مطالعہ کریں۔ اسی طرح انہیں دنیا کی ابھرتی ہوئی بڑی معیشت کی کامیابی کا راز سمجھ آجائے گا اوروہ اپنے ملک میں کاروباری کلچر فروغ دینے میں وہی راز لاگو کر سکیں گے۔ پاک چین اقتصادی راہداری ایک سڑک کا نام نہیں بلکہ یہ چین اور پاکستان کی معیشتوں کو آپس میں جوڑنے کا ایک جامع فریم ورک ہے جس میں پاکستان اور چین دونوں کی حکومتوں کو اپنا مثبت کردار ادا کر کے معیشت کو پروان اور خطے میں خوشحالی لانے کیلئے بھرپور اقدامات اٹھانا ہوں گے۔انہوں نے کہاکہ سی پیک منصوبے نے چترال کوتیزی سے ترقی کرنے کاموقع فراہم کیاہے ا س مقصدکے لئے چین پاکستان کے ساتھ قریبی تعاون کریگا،اقصادی رہداری منصوبہ خطے کی تقدیربدل دے گا۔انہوں نے کہاکہ ذوالفقارعلی بھٹو،بے نظیربھٹواورآصف علی زرداری نے چین کے ساتھ تعلقات کوبہت اہمیت دی ۔سی پیک منصوبے کے تحت بجلی کے منصوبے لگ رہے ہیں۔ہم سب کو ان کیلئے تیار رہنا ہوگا۔

Facebook Comments