64

تحریک انصاف نے کراچی کا امن تباہ کرنے کی کوشش کی ، عمران خان کی صورت میں نیا بانی ایم کیوایم برداشت نہیں کرینگے:بلاول بھٹو

کراچی ( آوازچترال رپورٹ) پاکستان پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ پاکستان تحریک انصاف اور ایم کیو ایم کا طرز سیاست ایک جیساہی ہے، کراچی والے عمران کی صورت نیا بانی ایم کیوایم برداشت نہیں کرینگے،سانحہ 12مئی 2007 کا براہ راست وہی شخص ہے جو اس وقت مشیر داخلہ اور آج میئر کراچی ہے ،میری عمر پر نہ جائیں میں تین نسلوں کی قربانیوں کا نچوڑ ہوں ۔کراچی کے باغ جناح میں پاکستان پیپلز پارٹی کے جلسہ سے خطاب کرتے ہوئے بلاول بھٹو زرداری کا کہنا تھا کہ 11 سال بعد مشرف کے دوسرے حواریوں نے ہم پر ایک بار پھر حملہ کیا ، 12 مئی 2007 کو مشرف کے حواریوں نے ہمارے کارکن شہید کیے تھے۔انہوں نے کہاکہ تحریک انصاف اور ایم کیو ایم کا طرز سیاست ایک جیساہی ہے، جس کا ثبوت ہمیں پچھلے دنوں حکم سعید گراؤ نڈ میں مل گیا تھا جہاں پی ٹی آئی نے امن تباہ کرنے کی کوشش کی لیکن ہم نے ان کی ہر کوشش ناکام بنادی،آزاد عدلیہ کی جدوجہد میں پیپلزپارٹی کے کارکن شہید ہوئے ، ہم نے جلسہ کرنے کیلئے تمام قانونی تقاضے پورے کیے ، شہدا کو خراج عقیدت پیش کرنے کیلئے حکیم سعید گراؤنڈ میں جلسے کا اعلان کیا ، پی ٹی آئی نے اپنے کیمپ سے ہم پر پتھراؤ کیا ،ان کے لیڈرز کے گارڈز نے فائرنگ کی،اس کے بعد پی ٹی آئی حکیم سعید گراؤ نڈ سے بھی بھاگ گئی۔انہوں نے کہا کہ سچ کی طاقت ہمارے ساتھ تھی اور رہے گی ، آج 12 مئی ہے جب ایک آمر نے مکا لہرایا، ڈکٹیٹر قہقہے لگارہاتھا اور کراچی کے گھروں سے لاشیں اٹھ رہی تھیں، دہشت گردوں کی بندوق اٹھی اور لاشوں کے ڈھیر لگ گئے۔ میں اس وقت 2007 میں سیاست میں نہیں آیا تھا، مجھے پتا ہے کب کون سے سانحے ہوئے اور کیسے ہوئے؟ ان سانحوں کا احساس مجھ میں ایسے ہی ہے کہ جیسے مجھ پر بیتے ہوں،میری عمر پر نہ جائیں میں تین نسلوں کی سیاسی کامیابیوں اور قربانیوں کا نچوڑ ہوں،وہ 12 مئی کی صبح تھی پاکستان پیپلز پارٹی کے جیالے ایئر پورٹ کی جانب اس وقت کے چیف جسٹس افتخار چوہدر ی کے استقبال کے لیئے نکلے تھے اور ڈرگ روڈ فلائی اوور کے قریب پاکستا ن پیپلز پارٹی کی قیادت کو گھیر لیا گیا،چاروں طرف سے گولیاں برسا دی گئیں، جیالے جان بچاتے ہوئے قریبی پٹر ول پمپ پہنچے جہاں درجنوں لوگ پہلے ہی محصور تھے مگر ان دہشتگردوں نے وہاں بھی دھاوا بول دیا،کیا آپ جانتے ہیں کے اس وقت شہر میں امن کا براہ ر است ذمے دار کون تھا؟ جی ہاں، یہ وہ ہی شخص ہے جو اس وقت مشیر داخلہ تھا اور اب یہ صاحب میئر کراچی ہے۔انہوں نے کہا کہ پاکستان پیپلز پارٹی کی ان کی بحالی کے لیے مستقبل منصوبہ بندی کریگی، یہ سب ہم ابھی کرنا چاہتے ہیں مگر ایم کیو ایم کا ٹولہ رکاوٹ بنا ہوا ہے وہ کراچی میں کسی بھی ترقیاتی کام کو برداشت نہیں کرتا،حالت تو یہ ہے کے ہم نے کراچی میں صفائی کے لیئے سالڈ ویسٹ مینجمنٹ بورڈبنایا اور چینی کمپنی کے ساتھ اس شہر کو صاف کرنے کا معاہدہ کیا ،مستقل قومی مصیبت نے اس کمپنی کی گاڑیوں میں ٹوٹ پھوٹ شروع کروا دی تاکہ کمپنی بھاگ جائے، نہ تو وہ کسی کو کام کرنے دیتے ہیں اور نہ خود کام کرتے ہیں۔

Facebook Comments