63

عدل و انصاف کے بغیر کوئی معاشرہ اور ملک ترقی نہیں کرسکتا ۔ہم ایسا پاکستان چاہتے ہیں جہاں کوئی وی آئی پی نہ ہو اور سب کو برابرکے حقوق حاصل ہو ۔ عنایت اللہ خان

پشاور ( آوازچترال رپورٹ) سینئر وزیر بلدیات ودیہی ترقی خیبرپختونخوا وپارلیمانی لیڈر جماعت اسلامی عنایت اللہ خان نے کہا ہے کہ بار و بینچ لازم و ملزوم اور انصاف کی فراہمی میں کلیدی کردار ادا کر تا ہے ۔ پاکستان کسی وڈیرے یا جاگردار نے نہیں بلکہ ایک وکیل نے بنایا تھا،وکلا ء کرپشن سے پاک خوشحال پاکستان کے قیام کے لئے جماعت اسلامی کا ساتھ دیں۔ ملک اندرونی و بیرونی بحرانوں میں گھرا ہواہے ۔ اللہ نے پاکستان کو ہر نعمت ، وسائل اور بہترین انسانی صلاحیتوں سے نوازا ہے لیکن غیر ذمہ دارانہ رویوں ، انتشار اور مفاد پرستی نے عوا م کے لیے مسائل پیدا کردیے ہیں ۔ عدل و انصاف کے بغیر کوئی معاشرہ اور ملک ترقی نہیں کرسکتا ۔ہم ایسا پاکستان چاہتے ہیں جہاں کوئی وی آئی پی نہ ہو اور سب کو برابرکے حقوق حاصل ہو ۔ اسٹیٹس کو کی حامی قوتوں نے عام آدمی کو تعلیم صحت روز گار کی سہولتوں سے محروم رکھا ہوا ہے ۔ملک میں آئین وقانو ن کی بالادستی ہوگی اور عوام کو سستا انصاف مہیا ہوگا تو ملک ترقی کے راہ پر گامزن ہوگا ۔ وہ ڈسٹرکٹ بار ایسوسی ایشن چارسدہ کے نومنتخب کابینہ کے حلف برداری کے تقریب میں مہمان خصوصی کی حیثیت سے خطاب کر رہے تھے ۔ تقریب میں ڈپٹی کمشنر چارسدہ منتظر خان ، امیر جماعت اسلامی ضلع چارسدہ ریاض خان ، ضلعی ناظم و نائب ناظم ، اسلامک لائرز فورم کے صوبائی صدر خان افضل ایڈووکیٹ ، سابق سیکرٹری جنر ل چارسدہ بار سیف اللہ ، نومنتخب صدر مجیب الرحمان ایڈووکیٹ ، جنر ل سیکرٹری سید امجد علی ، اسٹنٹ کمشنر چارسدہ عائشہ اور کثیر تعداد میں وکلاء نے شرکت کی ۔ سینئر وزیر عنایت اللہ خان نے نومنتخب صدر مجیب الرحمان ایڈووکیٹ اور ان کے کابینہ سے حلف لیا ۔ وکلاء نے سینئر وزیر کو شیلڈ پیش کی ۔ نومنتخب صدر مجیب الرحمان نے سینئر وزیر عنایت اللہ خان کو سپاسنامہ پیش کیا اور وکلاء کو درپیش مسائل سے آگاہ کیا ۔ سینئر وزیر نے بار کے لیے دس لاکھ روپے ، چیمبر کی تعمیر و فرنیچر کے لیے فنڈز کی فراہمی اور فلٹریشن پلانٹ کا اعلان کیا ۔ سینئر وزیر عنایت اللہ خان نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ نومنتخب کابینہ ڈسٹرکٹ بار کو غریب عوام کو سستا انصاف فراہم کرنے کے لیے استعمال کریں ۔ انہوں نے کہاکہ وکلاء کی تحریک نے پاکستان میں جمہوریت کو مضبوط بنانے میں اہم کردار اداکیا ہے ۔انہوں نے کہاکہ پا کستان کو اللہ تعالیٰ نے بہترین معدنی اور انسانی وسائل سے مالا مال کررکھا ہے ۔اگر قومی وسائل کو عوام کی فلاح پر خرچ کیا جاتا تو آج ملک کی یہ صورت حال نہ ہوتی ۔انہوں نے کہاکہ ملک میں آئین و قانون کی بالادستی ہوگی اور عدلیہ مضبوط ہوگا تو لوگوں کو آسانی سے انصاف فراہم ہوگا اور یہ ملک سپر پاور بن جائے گا۔ انہوں نے کہاکہ ملک میں قانون و آئین کی بالادستی کے لیے بار اور بینچ مشترکہ جدوجہد کریں تو ملک بحرانوں سے نکل کر ترقی کے راہ پر گامزن ہوگا۔

Facebook Comments