76

اسرائیل نے چوہوں کے ذریعے کونسی خطرنا ک بیماری مسلمان ملک میں بھیجی ؟ عرب صحافی کے دعوے نے پوری دنیا میں کھلبلی مچادی

 عمان(مانیٹرنگ ڈیسک)اسرائیل نے چوہوں کے ذریعے کونسی خطرنا ک بیماری مسلمان ملک میں بھیجی ؟ عرب صحافی کے دعوے نے پوری دنیا میں کھلبلی مچادی، اردن کے ایک صحافی نے حیرت انگیز انکشاف کیا ہے کہ اسرائیل نے اپنے دشمنوں سے نمٹنے کیلئے انتہائی تشویشناک کام کر نا شروع کر دیا ہے ۔ تفصیلات کے مطابق اردنی صحافی نے اس اسرائیل کی طرف سےمیدان میں چھوڑا جانے ہتھیار چوہوں کی بڑے تعداد ہے جس سے عرب ممالک شدید خطرے میں ہیں ۔ڈی ٹائمز آف اسرائیل کی رپورٹ کے مطابق بکر العابدی نامی اردنی صحافی نے کہا ہے کہ 1967ءمیں اسرائیل نے طاعون کےجراثیموں کے حامل چوہے مصر میں چھوڑے تھے تاکہ مصر کی فصلیں تباہ ہو سکیں اور لوگوں میں طاعون کی بیماری پھیل سکے۔اردونی صحافی بکر العابدی کےنے انکشاف کیا ہے کہ یہ چوہے مصر کے صحرائے سینا سے منسلک صوبوں کے قریب چھوڑے گئے ہیں ۔ ان چوہوں کی بہت بڑی تعداد آج بھی مصر میں موجود ہے جو فصلوں کو ایک بڑے پیمانے پر نقصان پہنچا رہے ہیں ۔ ان چوہوں کو ناروے میں اکٹھا کیا گیا پھر انہیں صرائے سینا کے قریب صوبوں میں چھوڑ ا گیا ۔ چوہوں کی نسل وہاں بڑی تیزی سے پروان چڑی ہے جو وہاں تیزی سے اپنی افزائش نسل کے ذریعے تعداد کو بڑھا رہی ہے ۔ اردنی صحافی العابدی کے انکشاف کے مطابق اسرائیل کی طرف سے مصر میں چھوڑے گئے ان چوہوں میں Bubonic plagueنامی خطرناک طاعون کے جراثیم موجود تھے، جسے بلیک ڈیتھ بھی کہا جاتا ہے۔یہ اس بیماری کے جراثیم ہیں جو قرون وسطیٰ میں دنیا میں پھیلی تھی اور لاکھوں انسانوں کو نگل گئی تھی، یہ انسانی تاریخ کی بدترین وبائی بیماری تھی۔بکر العابدی کےدعوے کے بعد اسرائیل اور یورپ سمیت پوری دنیا کومیں کھلبلی مچ گئی ہے ۔

Facebook Comments